The news is by your side.

Advertisement

نیب کا وزیراعلیٰ‌ سندھ کو تحقیقات کے لیے پھر طلب کرنے کا فیصلہ

کراچی: نیب نے وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ کو تحقیقات کے لیے پھر طلب کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

 تفصیلات کے مطابق نیب نے وزیر اعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ ایک بار پھر طلب کرنے کا فیصلہ کرلیا ہے، ذرائع کا کہنا ہے کہ وزیراعلیٰ سندھ کی طلبی کا نوٹس چند دن میں جاری کیا جائے گا۔

وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ دو بار پہلے بھی طلبی کے باوجود نیب میں پیش نہیں ہوئے تھے، مسلسل طلبی اور سوالنامے کے جواب جمع نہ کرائے جانے پر مراد علی شاہ کی گرفتاری کے امکانات ہیں۔

واضح رہے کہ نیب نے وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ کو 17 ستمبر کو طلب کیا تھا لیکن وہ نیب میں پیش نہیں ہوئے تھے ان کی جگہ پرنسپل سیکریٹری نیب میں پیش ہوئے تھے۔

مزید پڑھیں: وزیر اعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نیب میں کیوں پیش نہیں ہوئے؟

نیب نے وزیر اعلیٰ سندھ کے پرنسپل سیکریٹری کو سوال نامہ دیا تھا، 8 سوالات پر مشتمل سوال نامہ پرنسپل سیکریٹری کے ذریعے مراد علی شاہ کو پہنچایا گیا تھا۔

یاد رہے کہ چند روز قبل وزیراعلیٰ سندھ کا میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہنا تھا کہ نیب کا سوالنامہ ملا ہے، سوالات پڑھ کر مزہ آیا، سوالنامے کا خاطر خواہ جواب دوں گا۔

ان کا کہنا تھا کہ آٹھ دس ماہ سے گرفتاری کی باتیں سن رہا ہوں، قید کا کوئی مسئلہ نہیں ہے، پارٹی نامزد  کرتی ہے، پارٹی جسے چاہے گی وہ وزیراعلیٰ ہوگا ۔

خیال رہے کہ نیب نے وزیر اعلیٰ کو پاور پلانٹ تعمیرات میں سبسڈی کی تحقیقات کے لیے طلب کیا تھا اور غیر قانونی ٹھیکے، اختیارات کے ناجائز استعمال سے متعلق بھی پوچھ گچھ ہونا تھی، وزیر اعلیٰ پر سکرنڈ، دادو، ٹھٹھہ شوگر ملز کو غیر قانونی سبسڈی دینے کا الزام ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں