The news is by your side.

Advertisement

نیب آفس کے باہر پتھراؤ، 5 ن لیگی کارکنان نے ضمانت کروالی

لاہور: نیب دفتر کے باہر ہونے والے ہنگامے کے مقدمے میں ملوث ن لیگی کارکنان نے یڈیشنل سیشن جج کی عدالت سے 5 لیگی کارکنان نے ضمانت قبل از گرفتاری کروالی۔

تفصیلات کے مطابق ن لیگ کی نائب صدر مریم نواز کی قومی احتساب بیورو میں پیشی کے موقع پر نیب آفس کے باہر ہونے والی ہنگامہ آرائی، پتھراؤ اورجھگڑے کے مقدمے میں ملوث ن لیگی کارکنان نے ضمانت کروالی۔

ایڈیشنل سیشن جج کی عدالت میں ملک سیف الملوک،فیصل کھوکھر، شفیع کھوکھر سمیت 5 افراد نے ضمانت کی درخواست دائر کی تھی۔

ایڈیشنل سیشن جج نے ملزمان کی قبل از گرفتاری درخواست ضمانت27اگست تک منظور کی، لاہور کی عدالت نے ملزمان کو50،50 ہزار روپے کے مچلکے جمع کرانے کا حکم دے دیا۔ علاوہ ازیں عدالت نے تھانہ چوہنگ سے ہنگامہ آرائی سے متعلق رپورٹ بھی طلب کرلی ہے۔

واضح رہے کہ قومی احتساب بیورو (نیب) نے مسلم لیگ ن کی نائب صدر کی پیشی کے دوران ہنگامہ آرائی کا مقدمہ چوہنگ تھانے میں مریم نواز سمیت دیگر قائدین اور 300 کارکنان کے خلاف درج کرایا تھا۔

ایف آئی آر میں زخمی پولیس اہلکاروں کا ذکر بھی کیا گیا جبکہ مقدمے میں نیب دفتر پر حملے، توڑ پھوڑ اور کار سرکار میں مداخلت سمیت دیگر دفعات شامل کی گئیں ہیں۔

مزید پڑھیں : نیب پیشی پر ہنگامہ آرائی، مریم نواز اور 300 افراد کے خلاف مقدمہ درج

بعد ازاں اس معاملے پر عدالت میں58 ن لیگی کارکنوں کی جانب سے درخواست ضمانت دائر کی گئی۔ وکیل درخواست گزار نے کہا کہ ملزمان پر ہنگامہ آرائی کا الزام غلط ہے، ملزمان کے خلاف سیاسی بنیادوں پر مقدمہ درج کیا گیا، عدالت ملزمان کو ضمانت پر رہا کرنے کا حکم دے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں