The news is by your side.

Advertisement

ہنگامہ آرائی کی آڑمیں نیب پراسیکیوشن ٹیم پرحملے کی کوشش کی گئی، نیب

اسلام آباد : نیب پراسیکیوشن ٹیم نےشریف خاندان کی پیشی کے موقع پر احتساب عدالت میں پیش آنے والے واقعے کی رپورٹ نیب ہیڈ کوارٹرز میں جمع کرادی۔

تفصیلات کے مطابق احتساب عدالت کے جج نے کمرہ عدالت میں وکلا کی ہلڑ بازی کے باعث سابق وزیراعظم نوازشریف، مریم نواز اور کیپٹن ریٹائرڈ صفدر پرفرد جرم کی کارروائی 19 اکتوبر تک کے لیے ملتوی ہوگئی۔

نیب پراسیکیوشن ٹیم نے ہیڈ کوارٹرز کو احتساب عدالت میں پیش آنے والے واقعے سے متعلق آگاہ کردیا، رپورٹ میں نیب ٹیم نے کہا ہے کہ ہنگامہ آرائی کی آڑ میں نیب پراسیکیوشن ٹیم پر حملے کی کوشش کی گئی۔

نیب ٹیم نے رپورٹ میں کہا کہ پراسیکیوشن ٹیم کے سربراہ سردار مظفرعباسی کو دھکے دیے گئےجبکہ پراسیکیوشن ٹیم کو ڈائس سے ہٹانےکی کوشش کی گئی۔

دوسری جانب احتساب عدالت کے جج محمد بشیر نے آئی جی اسلام آباد کو وکیل پر تشدد کے واقعے کی تحقیقات کا حکم دے کر رپورٹ پیش کرنے کی ہدایت کی۔

خیال رہے کہ آج احتساب عدالت میں سماعت سے قبل وکلا اور جوڈیشل کمپلیکس کے باہر پولیس اہلکاروں کے درمیان تلخ کلامی ہوئی جبکہ اہلکاروں کے تشدد سے وکیل زخمی ہوگیا تھا جس پر وکلا نے شدید احتجاج کیا۔


احتساب عدالت میں پیش آنے والاواقعہ افسوس ناک ہے‘ طلال چوہدری


واضح رہے کہ احتساب عدالت کے باہر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے وزیر مملکت برائے داخلہ طلال چوہدری کا کہنا تھا کہ آج جو واقعہ ہوا وہ نہیں ہونا چاہیے تھا۔


اگرآپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اوراگرآپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تواسے اپنی فیس بک وال پرشیئرکریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں