سزا معطلی کیس: نیب پراسیکیوٹرآج دلائل دیں گے -
The news is by your side.

Advertisement

سزا معطلی کیس: نیب پراسیکیوٹرآج دلائل دیں گے

اسلام آباد : نواز شریف، ان کی صاحبزادی مریم نوازاور کیپٹن (ر) صفدر کی سزا معطلی کی درخواست پراسلام آباد ہائی کورٹ میں سماعت آج ہوگی، نیب پراسیکیوٹر اپنے دلائل مکمل کریں گے۔

تفصیلات کے مطابق اسلام آباد ہائی کورٹ میں جسٹس اطہرمن اللہ اورجسٹس میاں گل حسن پرمشتمل 2 رکنی بینچ شریف خاندان کی درخواست ضمانت پر آج سماعت کرے گا۔

شریف خاندان کی جانب سے دائر کردہ درخواستوں پرنیب پراسیکیوٹر سردار مظفرعباسی آج اپنے دلائل مکمل کریں گے۔

عدالت میں گزشتہ روز سابق وزیراعظم نوازشریف، ان کی صاحبزادی مریم نواز اور داماد کیپٹن ریٹائرڈ صفدر کی سزا کے خلاف اپیل پرسماعت کے دوران امجد پرویز نے دلائل مکمل کیے تھے۔

مریم نوازاورکیپٹن صفدرکے وکیل کے دلائل مکمل

جسٹس میاں گل حسین نے سماعت کے دوران سوال کیا تھا کہ لندن فلیٹس کا سیٹلر کون ہے؟، جس پر امجد پرویز نےجواب دیا تھا کہ ’ حسن نواز بینفشری اور سیٹلر ہیں۔ اس موقع پر عدالت نے پوچھا کہ حسن نواز بینفشری بھی ہیں اور سیٹلر بھی ؟۔ جس پر امجد پرویز نے جواب دیا کہ یہ میرا کیس نہیں ، میں نے سیٹلمنٹ کو نہیں دیکھا۔

عدالت نے مزید استفار کیا تھا کہ 2006 سے پہلے یہ فلیٹ کس کی ملکیت تھے ؟، قطری نے کب کہا کہ یہ فلیٹ اب آپ کی ملکیت ہیں؟۔ عدالت نے امجد پرویز سے کہا تھا کہ سیٹلمنٹ کی درست تاریخ بتائیں ، کل آپ 2005 کہہ رہے تھے اور آج آپ 2006 کہہ رہے ہیں۔

واضح رہے کہ احتساب عدالت کی جانب سے 6 جولائی کو ایون فیلڈ ریفرنس میں نواشریف کو 11، مریم نواز کو 8 اور کیپٹن صفدر کو ایک سال قید کی سزا سنائی گئی تھی۔

نوازشریف اور ان کی بیٹی مریم نواز 13 جولائی کو جب لندن سے وطن واپس لوٹے تو دونوں کو لاہور ایئرپورٹ پر طیارے سے ہی گرفتار کرکے اڈیالہ جیل منتقل کردیا گیا تھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں