نیب نے پنجاب کی 7 ہاؤسنگ اسکیموں کے خلاف تحقیقات کا آغاز کردیا
The news is by your side.

Advertisement

پنجاب کی 7 ہاؤسنگ اسکیموں کے خلاف نیب کی تحقیقات کا آغاز

راولپنڈی: قومی احتساب بیورو (نیب) نے جعلی پلاٹ فروخت کر کے عوام سے رقم وصول کرنے والی پنجاب کی7 ہاؤسنگ اسکیموں کے خلاف اور چار موٹرسائیکل کمپنیز کے خلاف تحقیقات کا آغاز کردیا۔

ترجمان قومی احتساب بیور کی جانب سے جاری اعلامیے کے مطابق نیب لاہورنے7ہاؤسنگ سوسائٹیزکےخلاف تحقیقات شروع کردیں، جن اسکیموں کے خلاف انکوائری کی جائے گی اُن میں ایڈن سٹی لاہور کینٹ،ایڈن لائف سرگودھا، صدیق نگر ہاؤسنگ اسکیم ساہیوال ، الحمدگارڈن ہاؤسنگ اسکیم، ایل ڈی اےایونیو ون لاہور ، ایڈن پوائنٹ لاہور اور ایڈن ویلیو ہومز لاہور شامل ہیں۔

مزید پڑھیں: آشیانہ ہاؤسنگ کیس: فواد حسن فواد کے انکشافات

نیب اعلامیے مطابق کمپنیوں پر الزام ہے کہ انہوں نے پلاٹوں کی فروخت کا جھانسہ دے کر عوام سے بڑی تعداد میں رقم وصول کی۔ قومی احتساب بیورو نے متاثرہ افراد سے اپیل کی ہے کہ وہ 15 روز کے اندر بمعہ دستاویزات نیب لاہور آفس رابطہ کریں تاکہ جعلسازوں کے خلاف کارروائی عمل میں لائی جاسکے۔

دوسری جانب نیب لاہور نے چار موٹرسائیکل کمپنیز کے خلاف بھی تحیققات شروع کی ہیں، ان کمپنیوں میں الخورشید گروپ، فاسٹ مارکیٹنگ گلوبل، روشن نیٹ ورک مستقبل اور مائیکرو سپلائی سروسز شامل ہیں۔

ان کمپنیز مالکان  نے عوام کو موٹرسائیکل کی بکنگ، فروخت اور سرمایہ کاری کا جھانسہ دیا، نیب نے ان  متاثرین سے بھی رقوم کی واپسی کے لیے دستاویزی ثبوت پندرہ روز میں جمع کروانے کی ہدایت کی ہے۔

واضح رہے کہ قومی احتساب بیورو لاہور میں سابق وفاقی وزیر ریلوے خواجہ سعد رفیق اور ان کے بھائی سلمان رفیق کے خلاف پیرا گون ہاؤسنگ اسکیم کے خلاف تحقیقات جاری ہیں۔

نیب لاہور  نے خواجہ سعد رفیق اور اُن کے بھائی کو تفتیش کے لیے 15 اگست کو از خود پیش ہونے کا حکم دیا، ذرائع کے مطابق دونوں شخصیات کو ہدایت کی گئی ہیں کہ وہ پیرا گون ہاؤسنگ سوسائٹی سے متعلق ریکارڈ لے کر آئیں۔

یاد رہے کہ اس سے قبل بھی سعد رفیق اور ان کے بھائی مشیر صحت سلمان رفیق محکمہ صحت میں ہونے والی کرپشن سے متعلق نیب میں پیشی بھگت چکے ہیں۔

 

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں