The news is by your side.

Advertisement

افغانیوں کو شناختی کارڈ دینے کا قصوروار نادرا ہے، افغان سفیر

اسلام آباد: پاکستان میں تعینات افغان سفیر عمر زخیوال نے کہا ہے کہ شربت گلہ نے عالمی سطح پر افغانیوں کے امیج کو بہتر بنایا ہے، ہزاروں کی تعداد میں افغانیوں کو شناختی کارڈ جاری کرنے کا قصور وار نادرا ہے۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے افغانی خاتون شربت گلہ سے تعزیت کے بعد کیا۔ افغان سفیر کا کہنا تھا کہ شربت گلہ جیل میں نہیں ہے وہ ہیپا ٹائٹس کی مریضہ ہے اس لیے انہیں اسپتال منتقل کردیا گیا ہے۔

حضرت عمر زخیوال نے کہا کہ پاکستانی قومی شناختی کارڈ کے ادارے نے  ہزاروں کی تعداد میں افغانیوں کے شناختی کارڈ بنائے جس میں عوام کا کوئی قصور نہیں ہے۔ اُن کا کہنا تھا کہ شربت گلہ نے عالمی سطح پر افغانیوں کی پہچان کے لیے اہم کردار ادا کیا۔

پڑھیں:  پشاور: سبزآنکھوں والی افغان خاتون شربت بی بی گرفتار

افغان سفیر نے کہا کہ شربت گلہ نے کوئی فراڈ نہیں کیا بلکہ شناختی کارڈ میں اپنا اصلی نام ظاہر کیا۔ حکومت پاکستان کو یہ معاملہ بہتر انداز سے حل کرنا چاہیے، شربت گلہ کو پناہ دینے کے لیے عالمی دنیا خواہش مند ہے مگر اُن کا پاکستان میں ہی رہنا باعث عزت ہے۔

مزید پڑھیں: افغان خاتون شربت گلہ 14روزہ ریمانڈ پر جیل منتقل

یاد رہے کہ سبز آنکھوں سے شہرت پانے والی افغان خاتون شربت گلہ کو اکتوبر کی 26 تاریخ کو پشاور سے گرفتار کیا گیا تھا۔ بعد ازاں ملزمہ کو عدالت نے 14 روزہ جوڈیشل ریمانڈ پر پولیس کے حوالے کیا۔

اسے سے متعلق: جعلی شناختی کارڈ کیس، شربت گلہ کی ضمانت مسترد

  شربت گلہ کا تعلق افغانستان سے ہے ،جو افغان جنگ کے بعد 1984ء میں اپنے خاندان کے ساتھ پاکستان آگئی تھی، شربت گلہ اپنی خوبصورت آنکھوں کے باعث شہرت کی بلندیوں پر اس وقت پہنچی جب نیشنل جیو گرافک میگزین کے ٹائٹل پر اس کی تصویر شائع ہوئی۔
Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں