The news is by your side.

Advertisement

طور خم پر تیسرے روز بھی فائرنگ، میجر جواد کی نماز جنازہ ادا، جنرل راحیل شریک

پشاور:پاکستان کے احتجاج کو نظر انداز کرتے ہوئے افغان فورسز نے آج ایک بار پھر طور خم سرحد پر بلااشتعال فائرنگ کردی جس کا پاک فورسز نے بھرپور جواب دیا ہے،فائرنگ سے شہید ایف سی کے میجر علی جواد کی نماز جنازہ ادا کردی گئی

اطلاعات کے مطابق آج تیسرے دن منگل کو بھی افغان فورسز نے بلا اشتعال فائرنگ کی جس کا پاکستانی سرحدی فورسز نے موثر جواب دیا۔ فائرنگ کے دوران کوئی شہری زخمی نہیں ہوا۔

فرنٹیر کانسٹیبلری کے ترجمان میجر خان محمد کا کہنا ہے کہ طور خم پر گیٹ کی تعمیر دوبارہ شروع کی گئی تو افغان فورسز نے  تیسری بار فائرنگ کی جو چھوٹے اور بڑے ہتھیاروں سے کی گئی۔

دوسری جانب افغان فورسز کی فائرنگ سے شہید میجر علی جواد کی نماز جنازہ پشاور گیریژن میں ادا کردی گئی  جس میں سپہ سالار جنرل راحیل شریف، کور کمانڈر پشاور اور ڈی  جی آئی ایس پی آر سمیت دیگر اعلیٰ عسکری حکام شریک ہوئے۔

نماز جنازہ میں شہید میجر علی کے بیٹوں اور دیگر رشتہ داروں نے بھی شرکت کی اور شہید کے درجات کی بلندی کے لیے دعا کی۔

آرمی چیف جنرل راحیل شریف نے میجر علی جواد چنگیزی کے اہل خانہ سے ملاقات کی اور بیٹوں کو دلاسہ دیا۔ شہید کے والد نے آرمی چیف سے کہا کہ ’’ ہمارے پورے خاندان کو اپنے بیٹے کی قربانی پر فخر ہے‘‘۔

بعدازاں نجی طیارے کے ذریعے شہید کا جسد خاکی کوئٹہ پہنچایا گیا جہاں اُن کی تدفین کوئٹہ بہشت زینب قبرستان میں اعلیٰ فوجی اعزاز کے ساتھ کردی گئی۔

واضح رہے کہ پیر کی شام طور خم سرحد پر افغان فورسز کی فائرنگ سے میجر علی جواد چنگیزی زخمی ہوگئے تھے جنہیں پشاور کے سی ایم ایچ اسپتال منتقل کیا گیا تھا، جہاں وہ زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے جام شہادت نوش کرگئے۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں