The news is by your side.

Advertisement

’میں، میں‘ کی عادت زندگی میں کامیاب بنانے کے لیے مددگار

آپ کے ارد گرد بہت سے ایسے افراد ہوں گے جو ہر وقت اپنے بارے میں گفتگو کرنا پسند کرتے ہیں اور ان کی زیادہ تر گفتگو ’میں، میں‘ کے گرد گھومتی ہے۔

ایسے خود پسند یا نرگسیت کا شکار افراد بہت الجھن کا باعث بنتے ہیں اور بعض اوقات یہ لوگوں کے ناپسندیدہ بن جاتے ہیں۔ حال ہی میں ماہرین نے انکشاف کیا ہے کہ ایسے افراد کا زندگی میں کامیاب ہونے کا امکان بہت زیادہ ہوتا ہے۔

ماہرین کے مطابق ’میں، میں‘ کرنے والے افراد ہمت نہیں ہارتے اور جب کوئی کام ان سے نہ ہوسکے تو یہ اسے چیلنج سمجھ کر اس پر دگنی محنت کرنے لگتے ہیں۔

ایسے افراد کی زندگی تکلیف دہ حد تک صرف ان کی اپنی ہی شخصیت کے گرد گھومتی ہے اور یہ شخصیت کا ایک منفی پہلو ہے، تاہم یہ عادت ان کے اپنے لیے بہت فائدہ مند ہوتی ہے۔

تحقیق میں دیکھا گیا کہ نرگسیت کا شکار افراد تعلیم اور پیشہ وارانہ زندگی میں دوسروں سے بہتر کارکردگی کا مظاہرہ کرتے ہیں۔

ماہرین کا کہنا ہے کہ ایسے افراد دوسرے لوگوں کی توجہ چاہتے ہیں چنانچہ یہ اپنی شخصیت کو نہ صرف ظاہری طور پر بہتر بناتے ہیں بلکہ زندگی میں بڑا مقام حاصل کرنے کی جدوجہد بھی کرتے ہیں تاکہ انہیں سراہا جائے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں