site
stats
کھیل

اسپاٹ فکسنگ کیس: ناصر جمشید نے معطلی کو چیلنج کردیا

لاہور:اسپاٹ فکسنگ کیس میں معطل کرکٹر ناصر جمشید نے اپنی معطلی کو چیلنج کردیا ہے۔

تفصیلات کےمطابق سابق پاکستانی اوپنر ناصر جمشید نے اپنے وکیل کے ذریعے پاکستان کرکٹ بورڈ کی جانب سے معطلی کو چیلنج کردیا ہے۔

ناصر جمشید کے وکیل حسن اقبال وڑائچ نے پی سی بی کو خط تحریر کر کے معطلی کےلیے استعمال کی گئی دفعات پر سوالات اٹھاتے ہوئے کہا ہے کہ ان موکل کو بنیادی حقوق سے محروم کرنا غلط ہے۔

کرکٹر کی جانب سے مؤقف اختیار کیا گیا ہے کہ چارج لگانے سے پہلے معطلی غیرقانونی ہے، معطلی بنیادی حقوق سے محروم کرنا ہے، کرکٹر پر کرپشن چارجز نہیں ہیں اس لیے انہیں معطل نہیں کیا جا سکتا۔

خیال رہےکہ پی سی بی کی جانب سے اب تک ناصر جمشید پر کرپشن کا کوئی الزام عائد نہیں کیا گیا بلکہ ان پر اینٹی کرپشن کوڈ کی دو شقوں کو توڑنے کا الزام ہے جن کا تعلق تحقیق میں رکاوٹ بننے اور تفتیشی حکام سے تعاون نہ کرنے سے ہے۔


ناصر جمشید کی پی سی بی کو عدالت لے جانے کی دھمکی


یاد رہےکہ گزشتہ دنوں ناصر جمشید نے گزشتہ دنوں پی سی بی پر نام بدنام کرنے کا الزام عائد کرتے ہوئے قانونی کارروائی کرنے کی دھمکی دی تھی۔

واضح رہے کہ پی سی بی کی جانب سے ناصر جمشید کو اسپاٹ فکسنگ اسکینڈل کا مرکزی کردار قرار دیتے ہوئے معطل کردیا گیا تھا۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top