The news is by your side.

Advertisement

قومی اسمبلی میں ہنگامہ آرائی، ملوث ارکان کے خلاف کارروائی کا فیصلہ

اسلام آباد: اسپیکر اسد قیصر نے قومی اسمبلی میں اپوزیشن کی جانب سے ہنگامہ آرائی کا نوٹس لے لیا۔

تفصیلات کے مطابق اسپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر نے ہنگامہ آرائی کا نوٹس لیتے ہوئے اسمبلی کی کارروائی کی فوٹیجز طلب کر لیں۔

ہنگامہ آرائی میں ملوث ارکان کے خلاف ضابطے کی کارروائی کا فیصلہ کیا گیا ہے، اسپیکر اسد قیصر نے تحقیقات کے لیے 8 فروری کو اجلاس طلب کر لیا۔

اسد قیصر کا کہنا تھا کہ طلب کر دہ اجلاس میں ہنگامہ آرائی کے معاملے کی تفتیش کی جائے گی، ایوان کی بے توقیری کسی صورت قابل قبول نہیں ہے۔

قومی اسمبلی میں “سینیٹ الیکشن اوپن بیلٹ” سے کرانے کا ترمیمی بل پیش

انھوں نے واضح کیا کہ ایوان میں موجود تمام ارکان قابل عزت ہیں، کسی کی بھی بے توقیری برداشت نہیں کی جائے گی، ویڈیو ریکارڈ دیکھنے کے بعد ہنگامہ آرائی کے لیے ذمہ دار ارکان کے خلاف کارروائی کی جائے گی۔

قومی اسمبلی اجلاس، عوامی نمائندے بچوں کی طرح لڑتے رہے

واضح رہے کہ  اوپن بیلٹ کے لیے جب حکومت کی جانب سے قومی اسمبلی میں بل پیش کیا گیا تھا تو اپوزیشن کی ہنگامہ آرائی کی وجہ سے ایوان اکھاڑہ بن گیا، قانون سازی کا ایوان میدان جنگ میں تبدیل ہو گیا، ایوان میں خوب نعرے بازی اور شور مچایا گیا اور ہاتھا پائی ہوئی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں