The news is by your side.

Advertisement

نواز لیگ کے کارکنان کا جذباتی انداز سوشل میڈیا پر تنقید کا نشانہ بن گیا

لاہور : سیاست کی دنیا کے رنگ عجب ہیں، مختلف سیاسی جماعتوں کے کارکن مختلف طریقہ سیاست رکھتے ہیں لیکن قربان جائیے نون لیگ پر جن کی سیاست اور اپنے قائد میاں نواز شریف سے والہانہ محبت کا اظہار سیاسی مسخروں کے ذریعے کرایا جاتا ہے۔

ایک زمانہ تھا کہ میاں نوازشریف وزیراعظم تھے اور اس دور میں ماڈل ٹاؤن کا سانحہ ہوا جس میں سرکاری مشینری کے ذریعے انسانی جانوں سے کھیلا گیا، چودہ افراد شہید اور سیکڑوں زخمی کر دئیے گئے اور یہیں سے نون لیگ کا پہلا مسخرہ سامنے آیا۔

جس کو گلوبٹ کہتے ہیں، گلوبٹ کی مسخرانہ حرکتیں اس حد تک شرمناک تھیں کہ گلو بٹ ڈھٹائی اور مسخرے پن کا آئی کون بن گیا۔

نون لیگ کو یہیں سبق سیکھ لینا چاہتے تھا لیکن پاناما لیکس ، ایون فیلڈ فلیٹس اور العزیزیہ ریفرنس میں جب سے میاں نواز شریف پہلے گرفتار اور اب ضمانت پر آئے ہیں، کارکنوں کے روپ میں ن لیگ کی صفوں میں بہت سے مسخرے دکھائی دیتے ہیں۔

ان کئی مسخروں میں ایک صاحب درجہ کمال پر ہیں، یہ کہیں شدید غم میں آنسو بہاتے نظر آتے ہیں تو کہیں قائد کی پیشی کے موقع پر فیڈر پیتے نظر آتے ہیں اور کہیں کام ہونے کے بعد بریانی لوٹتے دکھائی دیتے ہیں۔

بڑے میاں تو بڑے میاں چھوٹے میاں صاحب کی پیشی پر بھی بنیان پھاڑ کر روتے نظر آتے ہیں، یہ کارکنان نظریاتی ہیں، جذباتی ہیں یا حادثاتی ہیں، خود آتے ہیں یا لائے جاتے ہیں لیکن ان کا وجود شریف خاندان سے کارکنوں کی عقیدت کو بہت واضح کر دیتا ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں