The news is by your side.

Advertisement

نواز شریف، مریم اور کیپٹن (ر) صفدر جیل سے رہا، جاتی امرا پہنچ گئے

راولپنڈی: نواز شریف، مریم نواز اور کیپٹن (ر) صفدر کو اڈیالہ جیل سے رہا کر دیا گیا، رہائی کے بعد تینوں قیدی خصوصی طیارے سے لاہور ، جاتی امرا پہنچ گئے، حج ٹرمینل پر پولیس اور اینٹی رائٹ فورس کی نفری تعینات تھی۔

تفصیلات کے مطابق سابق وزیرِ اعظم اڈیالہ جیل سے رہائی کے بعد ایک قافلے کی صورت میں جاتی امرا پہنچ گئے، ن لیگی کارکن بڑی تعداد میں ان کے استقبال کے لیے جمع ہیں۔ جاتی امرا میں سیکورٹی کے سخت انتظامات کیے گئے ہیں۔

اسلام آباد ہائی کورٹ کے جسٹس اطہر من اللہ اور جسٹس میاں گل حسن اورنگ زیب پر مشتمل دو رکنی بینچ نے سزا معطلی کی درخواستوں پر سماعت کی اور دلائل سننے کے بعد فیصلہ محفوظ کیا، بعد ازاں نواز شریف، مریم نواز اور کیپٹن (ر) محمد صفدر کو احتساب عدالت کی جانب سے سنائی جانے والی سزائیں معطل کردیں اور انھیں رہا کرنے کا حکم جاری کر دیا۔

قبل ازیں اڈیالہ جیل کے تینوں قیدیوں کا روبکار ڈپٹی رجسٹرار ہائی کورٹ احسان خان کی جانب سے جاری کیا گیا، روبکار لانے والے اہل کاروں کے ساتھ مسلم لیگ ن کے رہنما طارق فضل چوہدری اور وکلا بھی ساتھ تھے۔

نواز شریف سے اڈیالہ جیل میں ن لیگی رہنماؤں نے ملاقات کی، شہباز شریف، مرتضیٰ عباسی اور سردار مہتاب ملاقات میں موجود تھے، اڈیالہ جیل کے سپرنٹنڈنٹ نے نواز شریف کو رہائی کی خبر سنائی تو نواز شریف نے جیل سپرنٹنڈنٹ کا خصوصی طور پر شکریہ ادا کیا۔

اڈیالہ جیل کے سپرنٹنڈنٹ نے نواز شریف کو چائے اور بسکٹ بھی پیش کیے، جیل سپرنٹنڈنٹ کے دفتر میں نواز شریف اور شہباز شریف گلے ملے۔

دریں اثنا نواز شریف، مریم اور کیپٹن صفدر کو لینے سیکورٹی اسکواڈ اڈیالہ جیل پہنچا تھا، اڈیالہ جیل کے اطراف میں پولیس کی اضافی نفری تعینات کر دی گئی تھی، سابق وزیرِ اعظم اور ان کی بیٹی کو لاہور لے جانے کے لیے خصوصی طیارہ بھی ایئر پورٹ پہنچ گیا ہے۔


نواز شریف کی رہائی کے سلسلے میں عدالتی کارروائی کی تفصیلات یہاں  ملاحظہ کریں


اڈیالہ جیل کے تینوں قیدیوں کی رہائی کے سلسلے میں جاتی امرا میں کارکنان جمع ہونا شروع ہو گئے، کارکنان نے رہائی کے فیصلے پر شکرانے کے نوافل بھی ادا کیے اور نعرے لگائے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں