اسلام آباد : نوازشریف اور مریم کی گرفتاری کیلئے نیب ٹیم ایئر پورٹ روانہ -
The news is by your side.

Advertisement

اسلام آباد : نوازشریف اور مریم کی گرفتاری کیلئے نیب ٹیم ایئر پورٹ روانہ

اسلام آباد : نوازشریف اور مریم کی گرفتاری کیلئے ڈپٹی ڈائریکٹر محبوب عالم کی سربراہی میں نیب ٹیم اسلام آباد ایئرپورٹ روانہ کردی گئی، طیارے کو اسلام آباد لینڈ کیے جانے کا امکان ہے،  مجرمان کے طبی معائنے کیلئے میڈیکل بورڈ تشکیل دے دیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق ایون فیلڈ ریفرنس میں سزا یافتہ نواز شریف اور مریم نواز نجی ایئر لائن کے ذریعے پاکستان پہنچ رہے ہیں، ان کی گرفتاری کیلئے تمام انتظامات مکمل کرلیے گئے ہیں، دونوں شخصیات کی گرفتاری کیلئے اسلام آباد میں بھی انتظامات مکمل کرلیے گئے ہیں۔

ذرائع کی جانب سے امکان ظاہر کیا جارہا ہے کہ  کسی بھی ناخوشگوار صورتحال سے نمٹنے کیلئے نجی ایئر لاائن کے طیارے کو لاہور کے بجا ئے اسلام آباد  میں اتارا جائے گا۔

نیب ٹیم اسلام آباد ایئرپورٹ روانہ کردی گئی، نیب ٹیم کی سربراہی ڈپٹی ڈائریکٹر محبوب عالم کررہے ہیں، ان کے ہمراہ اسسٹنٹ ڈائریکٹر عدنان بٹ، اسسٹنٹ ڈائریکٹر گل انور، آصف خان، اسسٹنٹ ڈائریکٹر مجتبیٰ خان، ڈپٹی اسسٹنٹ ڈائریکٹر بی ارفہ ٹیم میں شامل ہیں۔

علاوہ ازیں نوازشریف اور مریم نواز کےطبی معائنے کیلئے میڈیکل بورڈ اڈیالہ جیل روانہ ہوگیا ہے، میڈیکل بورڈ پولی کلینک اسپتال کے سینئر ڈاکٹرز پر مشتمل ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ مذکورہ بورڈ اڈیالہ جیل میں نوازشریف اورمریم نوازکاطبی معائنہ کرےگا، کنسلٹنٹ فزیشن ڈاکٹر آصف خصوصی میڈیکل بورڈ کےچیئرمین ہوں گے۔

شعبہ نیفرالوجی، میڈیسن، امراض قلب کے ڈاکٹرز میڈیکل بورڈ کاحصہ ہیں جن میں ڈاکٹرحامد اقبال، ڈاکٹر امتیازاحمد، ڈاکٹرعاصمہ کیانی ودیگر شامل ہیں۔

خصوصی میڈیکل بورڈ نیب کی درخواست پر تشکیل دیا گیا ہے، بورڈ جدید طبی آلات اورایمبولینس کے ہمراہ اڈیالہ جیل روانہ ہو گیا، بورڈ نوازشریف، مریم نوازکے طبی معائنے پرمشتمل رپورٹ نیب کو دےگا، میڈیکل بورڈ رپورٹ کے بعد نواز شریف، مریم نواز کو جیل منتقل کیا جائے گا۔

دوسری جانب راولپنڈی میں اڈیالہ جیل کے سامنے ہیلی پیڈ کےاطراف پولیس نے سرچ آپریشن کیا ہے، ہیلی پیڈ سے اڈیالہ جیل کے روٹ کی سیکیورٹی رینجرز نےسنبھال لی،جیل ذرائع کے مطابق ہیلی پیڈ اور اس کے اطراف رینجرز کے تازہ دم دستے بھی تعینات کئے گئے ہیں۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں‘مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔ 

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں