The news is by your side.

Advertisement

الیکشن سے پہلے عدالتوں میں طلب کیا جانا دھاندلی کا آغاز ہے: نواز شریف

اسلام آباد: سابق وزیر اعظم نواز شریف کا کہنا ہے کہ الیکشن سے پہلے عدالتوں میں طلب کیا جانا دھاندلی کا آغاز ہے۔ اس دن کا اس وقت آغاز ہوا جب مجھے نااہل کیا گیا اور پارٹی صدارت سے ہٹایا گیا۔

تفصیلات کے مطابق سابق وزیر اعظم نواز شریف نے کمرہ عدالت میں غیر رسمی گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ الیکشن سے پہلے عدالتوں میں طلب کیا جانا دھاندلی کا آغاز ہے۔ آج سے نہیں بہت پہلے سے یہ آغاز ہو چکا تھا۔

نواز شریف نے کہا کہ اس دن کا اس وقت آغاز ہوا جب مجھے نااہل کیا گیا اور پارٹی صدارت سے ہٹایا گیا۔ ہمارے امیدواروں کو پارٹی ٹکٹس سے محروم کر دیا گیا۔ ’ان مثالوں سے بڑھ کر اور کیا قبل از الیکشن دھاندلی ہے‘۔

انہوں نے کہا کہ مسلم لیگ ن کے لوگوں کو دوسری پارٹیوں میں شامل کروایا گیا۔ ہر روز سو موٹو لیا جاتا ہے۔ ن لیگ کے لوگ دیگر پارٹیوں میں شامل کرنے پر سوموٹو کب لیا جائے گا۔

نواز شریف کا کہنا تھا کہ ریحام خان کی کتاب پر عمران خان یا ان کے لوگوں کو علم ہوگا مجھے نہیں، ریحام خان سے متعلق میں خود اخباروں میں پڑھ رہا ہوں۔

انہوں نے کہا کہ 2018 تبدیلی کا سال ہے اور تبدیلی آکر رہے گی۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں