The news is by your side.

Advertisement

دھرنوں کے وقت تحمل اورصبر سے کام لیا‘ نوازشریف

اسلام آباد : سابق وزیراعظم میاں نوازشریف کا کہنا ہے کہ چاہتے ہیں ملک میں حقیقی جمہوریت ہو توسب کھڑے ہوں، اب کھڑے ہوں گے تو یہ ممکن ہو جائے گا۔

تفصیلات کے مطابق احتساب عدالت میں پیشی کے موقع پرصحافیوں سے غیررسمی گفتگو کرتے ہوئے مسلم لیگ ن کے قائد نے کہا کہ کل مکمل تقریر ٹی وی پرچلنے پرخود بڑا حیران ہوں۔

سابق وزیراعظم نے کہا کہ سب کو حق کے لیے کھڑا ہونا ہو گا، چاہتے ہیں ملک میں حقیقی جمہوریت ہو توسب کھڑے ہوں، اب کھڑے ہوں گے تو یہ ممکن ہو جائے گا۔

نوازشریف نے کہا کہ دھرنوں کے وقت تحمل اور صبر سے کام لیا، ماتحت کو فارغ کرسکتا تھا، ملک کی خاطرتحمل سے کام لیا۔

مسلم لیگ ن کے قائد نوازشریف نے کہا کہ عدالت میں بتانا تھا توبتا دیا ہے، حقائق منظرعام پر آنے چاہییں۔ انہوں نے کہا کہ ہرچیزکا وقت ہوتاہے، سچ ریکارڈ پرلانے کے لیے کل بتایا۔

سابق وزیراعظم نے صحافیوں سے غیررسمی گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ مشاہداللہ اورپرویزرشید کوفارغ کرنا بردباری کا حصہ تھا۔

ایون فیلڈ ریفرنس: نواز شریف نے آخری 4 سوالوں کے جواب دے دیے

خیال رہے کہ گزشتہ روز نوازشریف کا کہنا تھا کہ دھرنوں کے ذریعے لشکر کشی کی گئی، پیغام دیا گیا وزارت عظمیٰ سے مستعفی ہویا طویل چھٹی پر باہر چلے جاؤ۔ ماتحت اداروں کے ملازم کا وزیر اعظم کو ایسا پیغام افسوس ناک ہے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں