فلیٹس کی خریداری کے لیے نواز شریف کو منی ٹریل بتانی ہوگی، عمران خان
The news is by your side.

Advertisement

شریف خاندان آئی سی آئی جے اور بی بی سی کے خلاف کیس کریں، عمران خان

اسلام آباد : چیئرمین تحریک انصاف عمران خان نے کہا ہے کہ ہمارا کیس مریم نواز نہیں بلکہ اس بنیادی نکتے پر ہے کہ لندن فلیٹس میں پیسہ نواز شریف کا ہے جس کی منی ٹریل بتانی اور ذرائع آمدنی دکھانی ہو گی۔

وہ پاناما پیپرز کیس کی سماعت کے موقع پر سپریم کورٹ کے باہر میڈیا سے گفتگو کر رہے تھے انہوں نے مسلم لیگ (ن) کو ہدف تنقید بناتے ہوئے کہا کہ اقتدار میں آکر وی آئی پی پیز کو 400 ارب روپے کی ادائیگی کی گئی ہے جنہوں نے 2013 کے الیکشن کے لیے ن لیگ کو فنڈنگ کی تھی۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ اگر پاناما پیپرز میں شریف خاندان کا نام نہیں آتا تویہ لوگ کبھی قبول ہی نہ کرتے کہ لندن کی جائیداد ان کی ملکیت میں ہیں،دنیا میں جس جس کے نام پانامہ پیپرز میں آئے ہیں کسی نے بھی اس سے انکار نہیں کیا اس لیے شریف فیملی بھی تحریک انصاف پر تلملانے کے بجائے آئی سی آئی جے اور بی بی سی کے خلاف کیس کرے۔

انہوںنے کہا کہ ہمارا کیس یہ ہے کہ لندن فلیٹس میں نوازشریف کا پیسہ ہے اور 1993 سے لندن فلیٹس کی ملکیت تبدیل نہیں ہوئی جب کہ اس حوالے سے قطری شہزادے کے خط نے بھی ثابت کردیا ہے کہ معاملے کو چھپانے کی کوشش کی جارہی ہے جس سے حکومت خود اپنے جال میں پھنس گئی ہے۔

چیئرمین تحریک انصاف کا مزید کہنا تھا کہ اسپیکرنے میرے خلاف ریفرنس بھیجا، الیکشن کمیشن میں ن لیگ کا وکیل تین ہفتے سے غیر حاضر ہے، میں درخواست کرتا ہوں کہ الیکشن کمیشن میرے خلاف بھیجے گئے ریفرنس پر فوری فیصلہ سنائے کیوں کہ میرا دامن صاف ہے اسی لیے مجھے کسی کا خوف نہیں۔

عمران خان نے پاناما کیس کے حوالے سے آج کی سماعت کے بارے میں بتایا کہ تحریک انصاف کے وکیل نے دلائل مکمل کرلیے ہیں اور منی ٹریل کی دستاویزات بھی دکھا دیے ہیں ، عدالت پر پورا اعتماد ہے قوم جلد خوشخبری سنے گی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں