The news is by your side.

Advertisement

ملک بھر میں مارکیٹس، دکانیں، شاپنگ مالز رات 10 بجے بند کرنے کا فیصلہ

اسلام آباد: کورونا وبا کی دوسری لہر کے پیش نظر نیشنل کمانڈ اینڈ کنٹرول سینٹرل (این سی او سی) نے کل سے ملک بھر میں مارکیٹس، دکانیں اور شاپنگ مالز رات 10 بجے بند کرنے کا فیصلہ کرلیا۔

اے آر وائی نیوز کی رپورٹ کے مطابق کورونا وبا کی دوسری لہر کے خدشے کے پیش نظر این سی او سی نے اہم فیصلے کرلیے جس کے تحت کل سے ملک بھر میں ماسک پہننا لازمی قرار دیا گیا ہے۔

این سی او سی کا کہنا ہے کہ ملک بھرمیں مارکیٹس، دکانیں اورشاپنگ مالز رات 10 بجے بند کرنےکا فیصلہ کیا گیا ہے، شادی ہالز اور ریسٹورنٹس بھی رات 10 بجے تک بند کردئیے جائیں گے۔

نیشنل کمانڈ اینڈ کنٹرول سینٹر کے مطابق تفریح گاہیں اور پارک شام 6 بجے بند کیے جائیں گے، اس دوران میڈیکل اسٹورز، کلینک اور اسپتال کھلے رہیں گے۔

واضح رہے کہ اس سے قبل وفاقی دارلحکومت اسلام آباد میں ماسک نہ پہننے پر دفعہ 144 نافذ کی گئی تھی، ڈی سی اسلام آباد کا کہنا تھا کہ دفعہ 144 کا نفاذ ماسک نہ پہننے والوں پر ہو گا۔

مزید پڑھیں: دفعہ 144 نافذ ، ماسک نہ پہننے پر جرمانہ ہوگا

اسلام آباد میں شاپنگ مالز، دکانوں،عوامی مقامات پرماسک پہننا لازمی قرار دیتے ہوئے کہا گیا کہ ماسک نہ پہننے پر جرمانہ اور پولیس کی جانب سے گرفتاری عمل میں لائی جاسکتی ہے۔ ڈپٹی کمشنر کا کہنا تھا کہ دفعہ 144 کا نفاذ 2 ماہ کیلئے ہو گا۔

یاد رہے کہ کراچی میں کورونا کیسز میں اضافے کے پیش نظر ضلع ملیر کے متعدد سرکاری اسکول بند کردیئے گئے ہیں، ضلع ملیر کے 8 سرکاری اسکولوں میں کوویڈ کیسز زیادہ رپورٹ ہوئے تھے۔

نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر کے مطابق ملک میں 24 گھنٹوں کے دوران مزید 825 کرونا کیسز رپورٹ ہوئے، جس سے ملک میں کرونا کے مصدقہ کیسز کی تعداد 3 لاکھ 30 ہزار 200 ہو گئی ہے۔

ملک میں 24 گھنٹوں کے دوران کرونا وائرس سے مزید 14 افراد کے انتقال کے بعد جاں بحق افراد کی تعداد 6 ہزار 759 ہو گئی جبکہ 611 مریضوں کی حالت تشویش ناک ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں