The news is by your side.

Advertisement

ٹیکسی استعمال کرنے کیلیے ایس ایچ او سے اجازت درکار

کراچی: سندھ حکومت نے لاک ڈاؤن کے دوران ٹیکسی میں سفر کرنے والوں کے لیے متعلقہ ایس ایچ او کا اجازت نامہ لازمی قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ ایک شہر سے دوسرے شہر اور سندھ سے دیگرصوبوں کو ٹیکسی میں مسافر لے جانے والے ڈرائیورز کے خلاف کارروائی کی جائے گی۔

وزیرٹرانسپورٹ سندھ سید اویس قادرشاہ نے مزید ہدایتیں جاری کرتے ہوئے کہا کہ سندھ سے پنجاب، کے پی اور بلوچستان ٹیکسیوں میں 4 سے زائد افراد سفر کر رہے ہیں، محکمہ کے افسران اور پولیس ڈرائیورز کے خلاف کارروائی کرکے گاڑی تھانے میں بند کریں۔

صوبائی وزیر نے کہا کہ ایک شہر سے دوسرے شہر کسی کو جانا ہوگا تو وہ متعلقہ تھانے کے ایس ایچ او سے اجازت نامہ لے کر جائے گا، شہری ایس ایچ او سے اجازت لے کر ایمرجنسی کے طور پر ٹیکسی استعمال کر سکتے ہیں۔

اسی طرح ٹیکسی میں ایمر جنسی کے طور پر ڈرائیور کے ساتھ ایک شہری کو سفر کرنے کی اجازت ہے، ٹیکسی میں سفر کرنے والے افراد ایس ایچ او کا اجازت نامہ ساتھ رکھیں جن کے پاس اجازت نامہ نہیں ہوگا اس کی گاڑی تھانے میں بند کردی جائے۔

اویس شاہ نے کہا کہ ٹیکسی میں دیگر صوبوں کو جانے پر بھی پابندی ہے، خلاف ورزی کرنے پرکارروائی ہوگی، ٹرانسپورٹ پر مکمل پابندی ہے شہری بلاوجہ سفر نہ کریں۔ انہوں نے کہا کہ لاک ڈاؤن میں بلاوجہ کسی کو بھی سفر کرنے کی اجازت نہیں ہے, گاڑی میں زیادہ افراد کے سفر کرنے سے کورونا وائرس پھیل سکتا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں