دھمکی آمیز تقریر، نہال ہاشمی کے خلاف مقدمہ چلانے کی تیاریاں nehal-hashmi
The news is by your side.

Advertisement

دھمکی آمیز تقریر، نہال ہاشمی کے خلاف مقدمہ چلانے کی تیاریاں

کراچی : اٹارنی جنرل آفس کی جانب سے نہال ہاشمی کے خلاف مقدمہ چلانے کے لیے خط سندھ حکومت کو موصول ہو گیا ہے جس کا قانونی اور آئینی جائزہ لیا جا رہا ہے۔

تفصیلات کے مطابق اٹارنی جنرل آف پاکستان کے آفس سے سندھ حکومت کو نہال ہاشمی کے خلاف متنازع تقریرکرنے پر مقدمہ چلانے کے لیے خط تحریر کیا گیا ہے جو کہ سندھ حکومت کوموصول ہو گیا ہے۔

ایڈوکیٹ جنرل سندھ نے خط موصول ہونے کی تصدیق کرتے ہوئے کہا کہ نہال ہاشمی پر مقدمہ قائم کرنے کے حوالے سے خط پرقانو نی مشاورت جاری ہے اورتفصیلی جائزے کے بعد جوابی خط لکھا جائے گا اور آئندہ کی حکمتِ عملی طے کی جائے گی۔


*متنازع بیان:‌ نہال ہاشمی سینیٹ کی رکنیت سے مستعفی


ایڈوکیٹ جنرل سندھ نے بتایا کہ خط میں موقف اختیار کیا گیا ہے کہ نہال ہاشمی نے متنازع تقریرکراچی میں کی ہے اور نہال ہاشمی کے خلاف 168 ،228 ، 505 کے تحت مقدمہ درج کیا جائے اور دفعہ 505 کے تحت سزا 7 اور 228 دفعہ کے تحت سزا 2 سال ہے۔

ایڈووکیٹ جنرل سندھ کا کہنا تھا کہ مذکورہ دفعات سرکاری ملازم کو دھمکانے سے متعلق ہیں جب کہ یہی دفعات انکوائری افسرکوہراساں کرنے سے بھی متعلق ہیں۔


*لیگی رہنما نہال ہاشمی کی پانامہ کیس کی تحقیقات کرنیوالی جے آئی ٹی کو کھلے عام سنگین دھمکیاں


خیال رہے چند روز قبل مسلم لیگ (ن) کے سینیٹر نہال ہاشمی نے ایک متنازع تقریر میں مقتدر اداروں کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا جس پر ان کی پارٹی رکنیت معطل کر کے سینیٹر شپ سے استعفیٰ لے لیا گیا تھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں