The news is by your side.

Advertisement

ملک میں بجلی کی طلب کو پورا کرنے کے لیے نیپرا کا تاریخی اقدام

اسلام آباد: نیشنل الیکٹرک پاور ریگولیٹری اتھارٹی (نیپرا) نے سی ٹی بی سی ایم کے تفصیلی ڈیزائن کی منظوری دے دی۔

تفصیلات کے مطابق نیپرا نے سی ٹی بی سی ایم کی منظوری دے دی،جس سے پاکستان میں بجلی کی مسابقتی ہول سیل مارکیٹ کھل سکے گی۔

نیپرا کے مطابق سی ٹی بی سی ایم کے منظور شدہ تفصیلی ڈیزائن کے مطابق مسابقتی بجلی کی یہ مارکیٹ اپریل 2022 تک پاکستان میں فعال ہو جائے گی۔

سی ٹی بی سی ایم ملک کی بجلی کی طلب کو پورا کرنے کے لیے کاروباری شفافیت، ادائیگی کے ضوابط اور پیداواری صلاحیت کی مناسب دستیابی لائے گی۔

بجلی پھر مہنگی ، اضافی وصولی نومبر کے بل میں کی جائے گی

نیپرا کا کہنا ہے کہ سی ٹی بی سی ایم بڑے صارفین خصوصاً صنعتوں کے لیے سود مند ثابت ہوگا، اس سے بجلی کی ہول سیل مارکیٹ کے بعد ریٹیل سیکٹر اور ریجنل مارکیٹ کے لیے بھی راستہ ہموار ہوگا۔

منصوبے کی تکمیل کو یقینی بنانے کے لیے نیپرا سی ٹی بی سی ایم کی مکمل مانیٹرنگ کرے گا۔

یاد رہے کہ گزشتہ روز نیپرا نے بجلی48 پیسے فی یونٹ مزید مہنگی کر دی ہے، بجلی کی قیمت میں اضافہ اگست کی فیول پرائس ایڈجسٹمنٹ کی مد میں کیا گیا۔

نیپرا کا کہنا تھا کہ اگست میں بجلی کی پیداواری لاگت 3 روپے 68 پیسے فی یونٹ رہی، اگست میں بجلی کی پیشگی فیول لاگت 3 روپے 20 پیسے فی یونٹ تھی۔

صارفین سے اضافی وصولی نومبر کے بل میں کی جائے گی، کے الیکٹرک صارفین پر فیصلے کا اطلاق نہیں ہوگا، بجلی کی قیمت بڑھنے سے صارفین پر 5 ارب روپے سے زائد کا بوجھ پڑے گا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں