جسٹس انور ظہیرجمالی نے چیف جسٹس کا حلف اٹھالیا -
The news is by your side.

Advertisement

جسٹس انور ظہیرجمالی نے چیف جسٹس کا حلف اٹھالیا

اسلام آباد: جسٹس انور ظہیر جمالی نے چیف جسٹس آف پاکستان کا حلف اٹھالیا، انور ظہیر جمالی پاکستان کے چوبیسویں چیف جسٹس بن گئے۔

ایوان صدر میں چیف جسٹس پاکستان کی حلف برداری کی تقریب ہوئی، تقریب کا آغاز تلاوت قرآن پاک سے کیا گیا، صدر ممنون حسین نے انور ظہیر جمالی سے چیف جسٹس آف پاکستان کے عہدے کاحلف لیا، انور ظہیر جمالی اکتیس دسمبر دو ہزار سولہ تک فرائض انجام دیں گے۔

حلف برداری کی تقریب میں وزیراعظم نوازشریف، آرمی چیف جنرل راحیل شریف، نیول چیف ذکااللہ، فضائیہ کے سربراہ سہیل امان اور جوائنٹ چیفس آف اسٹاف جنرل راشد محمود نے بھی شرکت کی۔

تقریب میں سابق چیف جسٹس افتخار چوہدری اور گورنرز سمیت دیگر نے بھی شریک تھے۔

سپریم کورٹ کے نئے چیف جسٹس انور ظہیر جمالی کا شمار پی سی او کے تحت حلف نہ اٹھانے والے ججز میں ہوتا ہے، انھوں نے تین نومبر دو ہزار سات کی ایمرجنسی میں پی سی او کے تحت حلف اُٹھانے سے انکار کیا، جس کی پاداش میں معزول کر دیئے گئے۔

وہ ایک مذہبی گھرانے سے تعلق رکھتے ہیں، تیس دسمبر انیس سو اکیاون کو حیدر آباد میں پیدا ہوئے، انیس سو اکہتر میں بیچلر کی ڈگری سندھ یونیورسٹی سے حاصل کی اور اسی جامعہ سے انیس سو تہتر میں قانون کی ڈگری لی، جس کے بعد آپ وکالت کے پیشے سے منسلک ہوگئے۔

آپ دو سال تک حیدرآباد سندھ لاء کالج میں لیکچرار بھی رہے، مئی انیس سو اٹھانوے کو سندھ ہائی کورٹ میں جج تعینات ہوئے، آپ ستائیس اگست دو ہزار آٹھ کو سندھ ہائی کورٹ کے چیف جسٹس بنے اور دو اگست دو ہزار نو تک فرائص سرانجام دیئے۔

آپ تین اگست دو ہزار نو کو سپریم کورٹ کے جج مقرر ہوئے، چیف جسٹس انور ظہیر جمالی قائمقام چیف الیکشن کمشنر بھی رہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں