The news is by your side.

Advertisement

سپریم کورٹ ٹیکنالوجی کے استعمال میں ایک قدم اور آگے

اسلام آباد: سپریم کورٹ میں ٹیکنالوجی کے استعمال کے نئے دور کا آغاز ہوگیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق سپریم کورٹ میں شاہین ایئرپورٹ سروسز سے متعلق کیس کی سماعت کے دوران سینئر وکیل خالد انور نے گھر سے وڈیو لنک پر دلائل کا آغاز کرتے ہوئے تاریخ رقم کی۔

سینئر وکیل کو سپریم کورٹ کے حکم پر کراچی رجسٹری نے وڈیولنک سہولت فراہم کی، کیونکہ علالت کے باعث وکیل خالد انور عدالت میں پیش ہونے سے قاصر تھے، یہ پاکستان کی تاریخ میں پہلی بار ہوا ہے کہ سپریم کورٹ میں کسی وکیل نے ویڈیو لنک کے ذریعے گھر سے دلائل کا آغاز کیا۔

اس موقع پر جسٹس مشیر عالم نے کہا کہ کرونا کے باعث وڈیو لنک کی سہولت خالد انور کو فراہم کی گئی ہے، مقدمات کی تیز سماعت اور عوام کی سہولت کے لیے تجربہ کامیاب ہونے پر آگے بڑھائیں گے۔

یہ بھی پڑھیں:  سندھ میں گاڑیوں کی رجسٹریشن کا جدید نظام متعارف

واضح رہے کہ اس سے قبل سپریم کورٹ آف پاکستان نےای کورٹ نظام کے ذریعے مقدمات کی سماعت کا سلسلہ شروع کیا تھا، ای کورٹ سے کم خرچ سے فوری انصاف ممکن ہوا، ای کورٹ کے تحت پہلے مقدمے کے آغاز میں ویڈیو لنک کے ذریعے کراچی سے ہی وکلا نے دلائل دیئے تھے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں