The news is by your side.

رینٹ اے کار کا نیا قانون، 13 لاکھ سے زائد ڈیجیٹل معاہدے ہوگئے

سعودی عرب میں رینٹ اے کار سروس میں ڈیجیٹل کار رینٹ ایگریمنٹ لازمی کیے جانے کا قانون لاگو ہونے کے بعد اب تک 13 لاکھ سے زائد معاہدے ہوچکے ہیں۔

سعودی خبررساں ایجنسی کے مطابق ٹرانسپورٹ اتھارٹی نے رواں برس رینٹ اے کار سروس کے لیے روایتی کاغذی معاہدے کی جگہ ڈیجیٹل ایگریمنٹ کو لازمی قراردیا تھا جس کے بعد پبلک ٹرانسپورٹ اتھارٹی کا کہنا ہے کہ اس قانون کے لاگو ہونے کے بعد اب تک مملکت میں 13 لاکھ سے زائد ڈیجیٹل معاہدے کیے جاچکے ہیں۔

اے آروائی نیوز براہِ راست دیکھیں live.arynews.tv پر

اس حوالے سے اتھارٹی کی جانب سے جاری بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ ’مملکت کے 83 شہروں اور کمشنریوں میں 2400 سے زائد رینٹ اے کارسروس ادارے رجسٹرڈ ہیں، ڈیجیٹل کار رینٹ ایگریمنٹ کا مقصد فریقین کے حقوق کا تحفظ ہے تاکہ فراہم کی جانے والی خدمات کے معیار کو بہتر بنایا جا سکے۔

ٹرانسپورٹ حکام کے مطابق رینٹ اے کار سروس کے شعبے میں ایک لاکھ 4 ہزار مختلف انواع کی گاڑیاں رجسٹرڈ ہیں، ’سب سے زیادہ معاہدے ریاض میں ہوئے جو 33 فیصد تھے جبکہ 24 فیصد مکہ ریجن اور 16 فیصد مشرقی ریجن میں کیے گئے۔

گاڑی کرائے پر لینے کے لیے 66 فیصد سعودی جبکہ 34 فیصد غیرملکیوں نے ڈیجیٹل معاہدے ہیں۔

یکساں ڈیجیٹل ایگریمنٹ کے حوالے سے اتھارٹی کا کہنا تھا کہ اس معاہدے میں فریقین کے حقوق کی ضمانت فراہم کی جاتی ہے جس کی پابندی لازمی ہے خلاف ورزی پر قانونی چارہ جوئی کی جاتی ہے۔

حکام نے یہ بھی واضح کیا ہے کہ رینٹ اے کار سروس والے اس امر کے پابند ہیں کہ وہ اپنے صارف سے ڈیجیٹل معاہدہ کریں صارفین کو بھی چاہیے کہ وہ روایتی کاغذی معاہدے کو تسلیم نہ کریں اگررینٹ اے کار کے ادارے کی جانب سے خلاف ورزی کی جائے تو اس کی شکایت ٹول فری نمبر 19929 پردرج کرائی جا سکتی ہے۔‘

Comments

یہ بھی پڑھیں