The news is by your side.

Advertisement

بیرون ملک سے سعودی عرب آنے والوں کے لئے اہم ہدایات

ریاض: سعودی عرب میں وزارت صحت کی جانب سے بیرون ملک سے واپس آنے والے سعودی شہریوں کے لیے ہاؤس آئسولیشن کے نئے ضوابط جاری کردئیے گئے۔

عرب میڈیا کے مطابق سعودی وزارت صحت کا کہنا ہے کہ بیرون ملک سے آنے والے مسافروں کو اقرار نامے پر دستخط کرنا ہوں گے کہ وہ مقررہ ضوابط کی مکمل پابندی کرتے ہوئے محفوظ طریقے سے مقررہ مدت تک گھروں میں قیام اور کسی بھی ہنگامی صورتحال میں فوری طور پر وزارت صحت سے رابطہ کریں گے۔

بیرون ملک سے آنے والے سعودی شہریوں کو اب حکومتی سینٹرز کے بجائے اپنے گھر میں مقررہ قواعد کے مطابق 14 دن آئسولیٹ ہونا ہوگا۔

وزارت صحت کی جانب سے جاری کردہ نئے ایس او پیز کے مطابق بیرون ملک سے آنے والوں کا ایئر پورٹ پر ابتدائی طبی معائنہ کیا جائے گا، ایسے افراد جن میں بیماری کی کوئی علامت نہ پائی جائے یا ایسے افراد جن میں معمولی درجہ یا ابتدائی نوعیت کی کوئی علامت ہو اور انہیں فوری اسپتال منتقل کرنے کی ضرورت نہ ہو انہیں مخصوص ہدایات کے تحت گھر جانے کی اجازت ہوگی۔

ایسے مسافر جن کو ’ہوم آئسولیشن‘ کے لیے وزارت صحت کی جانب سے ہدایت کی گئی ہو انہیں انسداد وبائی امراض کی جانب سے مرتب کردہ ایس او پیز فراہم کیے جائیں گے جن کی پابندی کرنا ان پر لازم ہوگا۔

رپورٹ کے مطابق گھر میں قرنطینہ کے لیے لازمی ہے کہ مقررہ سماجی فاصلے کے اصول پر مکمل طور پرعمل کیا جائے، ایسے تمام افراد کا ڈیٹا وزارت کے ویب سائٹ پر موجود ہو گا جس کا اندراج ’ تطمن‘ اور ’توکلنا‘ ایپ پر کیا جائے گا۔

گھریلو قرنطینہ کے بارے میں فراہم کیے جانے والے ضوابط میں ان طریقوں کی بھی وضاحت کی گئی ہے جن پر عمل کرتے ہوئے کوئی بھی شخص خود کو گھر میں محفوظ طریقے سے محدود کر سکتا ہے۔

علاوہ ازیں وزارت صحت کا واٹس اپ نمبر 920005937 بھی مخصوص ہے جس پر کوئی بھی شہری اپنے کوائف بتا کر صحت کے حوالے سے معلومات حاصل کر سکتا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں