The news is by your side.

Advertisement

حکومت نے نئے ٹیکسسز لگانے اور ٹیکس مراعات ختم کرنے کا فیصلہ

اسلام آباد: حکومت نے آئی ایم ایف کو خوش کرنے کی سر توڑ کوشش شروع کر دیں، اسپیشل سیلز ٹیکس اور ڈیوٹیز میں اضافہ کرنے کی تجاویز زیر غور ہیں۔

آئی ایم ایف کی جانب سے ٹیکس وصولی میں اضافے کی کڑی شرط کو پورا کرنے کیلئے حکومت نے نئے ٹیکسسز لگانے اور ٹیکس مراعات ختم کرنے کا فیصلہ کیا ہے ۔ ذرائع کے مطابق رعائتی سیلز ٹیکس کی چھوٹ ختم کرنے ، درآمدی اشیاء پر ایک فیصد اضافی کسٹمز ڈیوٹی، ریگیولیٹری ڈیوٹی کی شرح میں پانچ فیصد تک اضافے کئے جانے کا امکان ہے ۔

ان اقدامات کے علاوہ مزید تجاویز بھی زیر غور ہیں۔

وزیرِ خزانہ نے نئے ٹیکسوں کے اطلاق کی تصدیق کردی ہے، ان نئے ٹیکسوں سے گاڑیوں، الیکٹرانکس سے لے کر بچوں کے دودھ تک تمام درآمدی اشیاء مہنگی ہوجائی گی۔ حکومت نے رواں مالی سال کیلئے اکتیس سو چار ارب روپے کا ہدف مقرر کیا ہے ۔

جولائی سے اکتوبر کے دوران صرف آٹھ سو چودہ ارب روپے کا ٹیکس حاصل کیا گیا.

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں