The news is by your side.

Advertisement

نیویارک میں مبینہ پراپرٹی کی تحقیقات: آصف زرداری کی ضمانت میں8 نومبر تک توسیع

اسلام آباد : اسلام آباد ہائی کورٹ نے نیویارک میں مبینہ پراپرٹی کی تحقیقات کیس میں آصف زرداری کی ضمانت میں8 نومبر تک توسیع کر دی۔

تفصیلات کے مطابق اسلام آباد ہائی کورٹ‌ میں نیویارک میں مبینہ پراپرٹی کی نیب تحقیقات کا معاملے پر آصف زرداری کی ضمانت قبل از گرفتاری کی درخواست پر سماعت ہوئی، سماعت اسلام آباد ہائیکورٹ کے ڈویژن بنچ پر مشتمل چیف جسٹس اطہر من اللہ اور جسٹس عامر فاروق نے کی۔

آصف علی زرداری کی جانب سے فاروق ایچ نائیک عدالت میں پیش ہوئے اور آصف زرداری کی حاضری سے استثنیٰ کی درخواست کی۔

عدالت نے آصف زرداری کی حاضری سے استثنیٰ کی متفرق درخواست منظور کرلی اور آصف زرداری کی ضمانت میں8 نومبر تک توسیع کر دی۔

چیف جسٹس اسلام آباد ہائی کورٹ نے استفسار کیا نیب آرڈیننس آنے کے بعد اب کیسز کی سماعت کا طریقہ کار کیا ہو گا، کیا آرڈیننس آنے کے بعد نیب گرفتاری طریقہ کار کیا ہو گا۔

جس پر فاروق ایچ نائیک کا کہنا تھا کہ گرفتاری سے متعلق سابقہ طریقہ کار موجود ہے، جس پرجسٹس عامر فاروق نے کہا پارلیمنٹ کے پاس توئین پارلیمنٹ اختیار ہے، فاروق ایچ نائیک کا مزید کہنا تھا کہ جی پارلیمنٹ کے پاس توئین پارلیمنٹ کا کوئی اختیار نہیں ہے۔

جسٹس عمر فاروقی نے کہا کہ برطانیہ میں تو پارلیمنٹ کے پاس توئین پارلیمنٹ کا اختیار ہے جبکہ چیف جسٹس نے ریمارکس میں دیئے کہ پارلیمنٹ کے پاس قانون سازی کا سب سے بڑا اختیار ہے۔

بعد ازاں عدالت نے نیویارک میں آصف علی زرداری کی مبینہ پراپرٹی کی تحقیقات کیس کی سماعت 8 نومبر تک کے لئے ملتوی کر دی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں