The news is by your side.

Advertisement

پاکستان ورلڈکپ کی غیر متوقع ٹیم ہے، مقابلہ آسان نہیں، مچل سینٹنر

برمنگھم: نیوزی لینڈ کرکٹ ٹیم کے آل راؤنڈر مچل سینٹنر نے کہا ہے کہ پاکستان ورلڈکپ کی غیر متوقع ٹیم ہے، اُس کے خلاف میچ کھیلنا ہمارے لیے کوئی آسان کام نہیں ہے۔

برمنگھم میں کل ہونے والے میچ سے قبل پریس کانفرنس کرتے ہوئے نیوزی لینڈ کے آل راؤنڈر کا کہنا تھا کہ ’’ہماری ٹیم کو معلوم ہے کہ پاکستان اس قدر خطرناک ٹیم ہے کہ وہ کچھ بھی کرسکتی ہے‘‘۔

پاکستان کے بارے میں اظہار خیال کرتے ہوئے اُن کا کہنا تھا کہ ’’میرے خیال سے وہ بہت خطرناک ٹیم ہے کیونکہ اُن کے حیران کُن منفرد ریکارڈز ہیں، انہوں نے ایک سال قبل چیمپئنز ٹرافی اپنے نام کی اور گزشتہ میچ میں ساؤتھ افریقا کو بھی آؤٹ کلاس کیا‘‘۔

’’ہم اس وقت پوائنٹس ٹیبل پر پہلے نمبر پر ہیں مگر کل کے میچ کا کچھ بھی کہنا قبل از وقت ہوگا اس لیے ہماری ٹیم بھرپور انداز سے تیاری کررہی ہے‘‘۔

مزید پڑھیں: نیوزی لینڈ کے خلاف دو اسپنرز کے ساتھ میدان میں اتریں گے: اظہر محمود

اُن کا کہنا تھا کہ ’’میرے خیال سے پاکستانی ٹیم میدان میں کل فتح کا عزم لے کر ہی میدان میں اترے گی، وہ چاہیں گے کہ ہماری ٹیم کو شکست دے کر پوائنٹس ٹیبل پر اپنی پوزیشن مستحکم کریں‘‘۔

آل راؤنڈر مچل سینٹنر کا کہنا تھا کہ پاکستان نے جس انداز سے انگلینڈ اور جنوبی افریقا کو شکست دی وہ تمام ٹیموں کے لیے حیران کن ہے، کیونکہ وہ جب جیت کے جذبے میں سے میدان میں آئیں تو مزاج جارحانہ رکھتے ہیں اور آسانی سے کسی بھی ٹیم کو پچھاڑ دیتے ہیں۔

اُن کا کہنا تھا کہ شائقین کرکٹ کو کل بہت اچھا مقابلہ دیکھنے کو ملے گا کیونکہ نیوزی لینڈ کی ٹیم بھی بھرپور دفاع اور تیاری کے ساتھ میدان میں اترے گی۔ مچل سینٹنر کا کہنا تھا کہ پاکستان کا باؤلنگ اٹیک بہت مضبوط ہے مگر ہمیں اُن کی دیگر خامیوں کا بھی اچھی طرح سے علم ہے‘‘۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں