The news is by your side.

Advertisement

‘میڈیکل عملہ وائرس پھیلنے کی وجہ ہے’ برطانوی شہریوں نے حملے شروع کردیئے

لندن : برطانوی شہریوں نے کرونا وائرس سے فرنٹ لائن پر لڑنے والے میڈیکل عملے کو وائرس پھیلنے کی وجہ قرار دیتے ہوئے حملے کرنا شروع کردئیے۔

تفصیلات کے مطابق برطانیہ بھی کرونا وائرس کی زد پر ہے جہاں اب تک ہزاروں افراد کرونا کی وجہ سے لقمہ اجل بن چکے ہیں البتہ ڈاکٹروں اور میڈیکل عملے نے اپنی جانیں خطرے میں ڈال کر ہزاروں انسانوں کی جانیں بچائی بھی ہیں۔

انسانی جانوں کو وائرس سے بچانے والے خود غیر محفوظ ہوگئے جنہیں شہریوں کی جانب سے وائرس پھیلنے کی وجہ قرار دیتے ہوئے ہراساں کیا جارہا ہے۔

حال ہی میں نیشنل ہیلتھ سروس کی ایک 28 سالہ نرس ایمی ہال نے انکشاف کیا ہے کہ وہ یونیفارم پہنے ہیمشائر کے ایک کار پارکنگ ایریا میں تھی اچانک ایک درمیانی عمر کے شخص نے اس پر اس وقت تھوکا جب وہ دکان کی طرف جارہی تھی۔

ایمی ہال مدرز ڈے کے موقع پر اپنی والدہ کےلیے تحفہ خریدنے گئی تھی کہ رستے میں ان کے ساتھ یہ حادثہ پیش آگیا جس نے حیران و پریشان کردیا۔

نرس نے بتایا کہ حملے کے وقت وہ شخص چیخ رہا تھا کہ ‘تم وائرس پھیلانے والی ہو’۔ جس کے جواب میں نے کہا کہ ‘ تم وائرس پھیلا رہے ہو’۔

ایمی ہال کا کہنا تھا کہ میں حیران ہوں کہ کچھ لوگ ہمارے (میڈیکل عملے) متعلق ایسا بھی سوچتے ہیں، میں تو اپنی والدہ کےلیے پھولوں کا گلدستہ لینے جارہی تھی، اس واقعے نے حیران کردیا۔

خیال رہے کہ میڈٰکل عملے، پولیس اہلکاروں اور سپر مارکیٹ عملے پر ایسے حملوں کے کئی کیسز رپورٹ ہوچکے ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں