وفاقی حکومت سندھ سے ناانصافی کررہی ہے، نثار کھوڑو -
The news is by your side.

Advertisement

وفاقی حکومت سندھ سے ناانصافی کررہی ہے، نثار کھوڑو

کراچی : سینئر صوبائی وزیر اطلاعات و تعلیم نثار کھوڑو نے کہا ہے کہ وفاقی حکومت اپنے وعدے پورے نہیں کررہی ہے تو بلند بانگ دعوے بھی نہیں کرے۔

کراچی کے علاقے ملیر میں گورنمنٹ بوائز پرائمری اسکول کے دورے کے موقع پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے نثار کھوڑو کاکہنا تھا کہ وفاقی حکومت سندھ کو مکمل فنڈز دینے کے متعلق جھوٹ بول رہی ہے ،۔

انہوں نے کہا کہ وفاقی حکومت کو قابل تقسیم محاصل سے سندھ کو 164 ارب روپے دینے تھے جس میں سے اس وقت تک سندھ کو 50 ارب روپے دیئے گئے ہیں، سندھ کو 114 ارب دینے ہیں، جو اب تک سندھ کو نہیں دیئے جارہے۔

سندھ کو وفاقی حکومت کی جانب سے اپنا مکمل حصہ فراہم نہیں کیا جارہا جو کہ سندھ کے ساتھ ذیادتی ہے ،گورنمنٹ بوائز پبلک اسکول آدم گوٹھ کی عمارت چھ کروڑ کی لاگت سے 2008 میں مکمل ہوئی ۔

 اسکول کو فنکشنل کرنے میں سستی کی ذمہ دار شہری حکومت ہے ، اسکول کو گرلز ماڈل اسکول بنانے کا ارادہ تھا ۔ اسکول کو چلانے کیلئے جلد بورآف گورنرز تشکیل دیا جائے گا،۔

ایک سوال کے جواب میں ان کاکہنا تھا کہ اسکول کا دورہ میرا فرض ہے یہ بلدیاتی مہم کا حصہ نہیں ۔ صوبائی وزیر تعلیم کے دورے سے قبل گورنمنٹ بوائز پرائمری اسکول کے طالبعلموں نے احتجاج بھی کیا۔ جس میں طالبعلوں کا کہنا تھا کہ ان کے اسکول کی عمارت انہیں واپس دی جائے ۔

ڈائریکٹر پرائیوٹ اسکولز منسوب صدیقی کاکہنا ہے کہ بچوں کا مستقبل خراب نہیں کیا جائے گا، ڈی او آفس کیلئے لیا گیا پرائمری اسکول ملیر واپس دینے کی ہدایت کردی گئی ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں