site
stats
اہم ترین

ادارے ایک دوسرے کو ٹوئٹس سے مخاطب نہیں کرتے، چوہدری نثار

اسلام آباد: وزیر داخلہ چوہدری نثار نے کہا ہے کہ وزیراعظم ہاؤس ڈان لیکس پر نوٹی فکیشن جاری نہیں کرسکتا، اصل نوٹی فکیشن وزارت داخلہ جاری کرے گی، جب اصل نوٹی فکیشن جاری ہی نہیں ہوا تو بھونچال کیوں آگیا؟ انہوں نے آئی ایس پی آر کے ٹوئٹس پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ ایسے ٹوئٹس پاکستان کی جمہوریت اور انصاف کے لیے زہر قاتل ہیں۔

یہ بات انہوں نے طویل اور پرہجوم پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہی۔

ڈی جی آئی ایس پی آر کے ٹوئٹس پر تنقید

انہوں نے ڈی جی آئی ایس پی آر میجر جنرل آصف غفور کی جانب سے ڈان لیکس کے نوٹی فکیشن کو مسترد کرنے کے ٹوئٹس کو تنقید کا نشانہ بنایا اور کہا کہ ہم ٹوئٹ سے معاملات ہینڈل کرتے ہیں یہ ہماری بدقسمتی ہے، اداروں میں ایک دوسرے کو ٹوئٹس سے مخاطب نہیں کیا جاتا،ایسے ٹوئٹس پاکستان کی جمہوریت، سسٹم اور انصاف کے لیے زہر قاتل ہیں، اداروں میں ٹوئٹس کے ذریعے نظام نہیں چل سکتا،سمجھ نہیں آتا نوٹی فکیشن جاری نہیں ہوا تو بھونچال کیسے آگیا؟

اصل نوٹی فکیشن وزیراعظم ہاؤس نہیں وزارت داخلہ جاری کرے گی

ان کا کہنا تھا کہ اصل نوٹی فکیشن وزارت داخلہ کی جانب سے جاری ہونا ہے، وزیراعظم ہاؤس نوٹی فکیشن جاری نہیں کرسکتا،یہ شور کیوں ہے برپا خدا ہی جانے۔

جس طرح ٹوئٹس ٹھیک نہیں ایسے ہی زیر حراست شخص کا انٹرویو نشر کرنا بھی درست نہیں

نثار نے کہا کہ جس طرح ٹوئٹس صحیح نہیں، ویسے ہی کسی زیر حراست شخص کو میڈیا پر لانا غیر قانونی ہے،پہلے ہی کہا تھا کہ دہشت گرد کا انٹرویو،اس کے بیان کو بلیک لسٹ کیا جائے، اس انٹرویو کا آنا اس ساری کوشش اور کاوش کی نفی ہے۔

چوہدری نثار نے کہا کہ میڈیا پر ایک طوفان مچا ہوا تھا، میڈیا ایڈوائزر نے مشورہ دیا پریس کانفرنس ملتوی کردیں،میں نے کہا پریس کانفرنس ملتوی کرنا مناسب نہیں،میری پریس کانفرنس آج کے واقعے سے متعلق نہیں۔

دوسری جماعت ملنا سندھ کے عوام کا حق ہے

ان کا کہنا تھا کہ بدقسمتی سے سندھ کے حالات سب کے سامنے ہیں،سندھ میں  ایک ہی جماعت کی 10سال سے حکومت ہے،سندھ میں متبادل جماعت وہاں کے عوام کا حق ہے، میں سمجھتا ہوں ہمیں بہت پہلے سندھ میں آنا چاہیے تھا۔

سندھ رینجرز کو وفاق 12 ارب روپے دیتا ہے

انہوں نے کہا کہ ہم نے قانون نافذ کرنے والے اداروں کو مضبوط کرنے کی کوشش کی ہے، وفاق سندھ رینجرز کے لیے 12ارب روپے دیتا ہے۔

31 مئی کے بعد کوئی ضلع ایسا نہیں ہوگا جہاں پاسپورٹ دفتر نہ ہو

وزیر داخلہ کا کہنا تھا کہ 31 مئی کے بعد کوئی ضلع ایسا نہیں ہوگا جہاں پاسپورٹ دفتر نہ ہو، 3سال میں 72 پاسپورٹ آفس قائم کیے ہیں،پاسپورٹ دفاتر کی اکثریت سندھ اور کے پی کے میں ہے،حکومتوں سے نادرا دفاتر کے لیے زمین مانگی ہے،کراچی میں جلد ایگزیکٹو پاسپورٹ آفس کا افتتاح کروں گا۔

سرحد پر غیر قانونی آمدورفت روکنے کے لیے باڑ لگا رہے ہیں

پاک افغان بارڈر کے معاملے پر انہوں نے کہا کہ طورخم بارڈر پر ہم نے غیر قانونی آمدورفت پر پابندی لگائی، ڈیڑھ سال میں سول آرمڈ فورسز کے لیے 88 ارب روپے رکھے ہیں،سرحد پر غیر قانونی آمدورفت روکنے کے لیے باڑ لگا رہے ہیں۔

وزیراعظم کراچی آکر سول ملٹری اجلاس بلائیں

کراچی سے متعلق انہوں نے کہا کہ میری تجویز ہے کہ وزیراعظم کراچی آکر آپریشن سے متعلق اجلاس کریں جس میں کراچی آپریشن سے متعلق اقدامات کیے جائیں، وزیراعظم کو کراچی میں سول ملٹری اجلاس بلانے کامشورہ دوں گا۔

کراچی ایک شخص کے ہاتھوں یرغمال بنا ہوا تھا

نثار نے کہا کہ کراچی ایک شخص کے ہاتھوں یرغمال بنا ہوا تھا، ایک شخص کہتا تھا شہر بند کردو تو شہر بندہوجاتا تھا، ایک شخص کہتا تھا بھتہ لو تو بھتہ خور ی شروع ہوجاتی تھی، کراچی میں اسٹریٹ کرائمز میں اضافہ ہوا، چائنہ کٹنگ جاری ہے اور کرپشن عروج ہے۔

بانی ایم کیو ایم اور ان کے حمایتوں کو پاکستان کا آئین ماننے کا اعلان کرنا ہوگا

نثار کا کہنا تھا کہ قومی دھارے میں وہی شامل ہوسکتا ہے جو پاکستان اور آئین پر یقین رکھتا ہے،بانی ایم کیو ایم اور حمایتوں کو اعلان کرنا ہوگا کہ وہ پاکستان کا آئین مانتے ہیں،اگر وہ پاکستان کا آئین نہیں مانتے تو انہیں یاست کرنے کا کیا حق ہے؟

زرداری کو پتا ہے ان کے لاپتا دوست کہاں ہیں تو مجھ سے شیئر کریں

انہوں نے کہا کہ آصف زرداری کہتے ہیں مجھے معلوم ہے میرے لاپتا دوستوں کو کس نے اٹھایا،آصف زرداری سے درخواست ہے کہ اگر آپ کو معلوم ہے تو مجھ سے شیئر کریں،میں ہمیشہ سے کسی کو لاپتا کرنے کا مخالف رہا ہوں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top