The news is by your side.

Advertisement

دبئی میں ضمانت کے لیے پاسپورٹ جمع کروانے کی ضرورت نہیں

دبئی : متحدہ عرب امارات جانے والے سیّاحوں کو قانونی چارہ جوئی کے دوران اپنا پاسپورٹ یا عزیز و اقارب کی ضمانت کے بجائے ’اسمارٹ بیل‘برقی ضمانت متعارف کروادی۔

تفصیلات کے مطابق متحدہ عرب امارات کے وزیر اعظم اور دبئی کے حاکم شیخ محمد بن راشد المتکوم کی جانب سے سیّاحوں کی سہولت کے لیے دبئی اور دیگر ریاستوں میں مختلف جرائم میں ملوث افراد کےلیے برقی ضمانت متعارف کروادی۔

دبئی کے پراسیکیوٹر جنرل علی حمید بن خاتم کا کہنا ہے کہ متحدہ عرب امارات میں کم نوعیت کے جرائم میں ملوث مشتبہ افراد اور سیّاحوں کو ضمانت کے لیے اپنا پاسپورٹ چھوڑنے یا عزیز و اقارب کی ضمانت دینے کی ضرورت نہیں۔

پبلک پراسٹکیوٹر کا کہنا تھا کہ یہ منصوبہ بہت جلد دبئی سمیت تمام ریاستوں میں نافذ کردیا جائے گا، اسمارٹ ضمانت کے اقدامات حکومت کے نظام کو بہتر بنانے اور بغیر کاغذ کے منصوبے کا حصّہ ہے۔


یو اے ای:مردوں اورعورتوں کے لیے یکساں تنخواہوں کا قانون منظور


ان کا کہنا تھا کہ ان اقدامات کے بعد متحدہ عرب امارات میں بسنے والے مقامی افراد اور سیّاح اپنے خلاف قانونی کارروائیوں کے باوجود اپنے ویزہ اور پاسپورٹ میں توسیع کرواسکیں گے۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ گذشتہ سال تقریباً پچاس ہزار سے زائد پاسپورٹ ضمانت کے طور پر جمع کیے گئے تھے، پولیس حکام کے لیے انہیں سنبھالنا مشکل کام تھا.

اس لیے برقی ضمانت’اسمارٹ بیل‘ متعارف کروائی گئی تاکہ پاسپورٹ جمع کرنے کی مشکل ختم ہو۔  وہ سیّاح اور مقامی افراد اپنے پاسپورٹس اپنے پاس ہی رکھ سکیں گے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں