شمالی کوریا نے جوہری پروگرام دوبارہ شروع کرنے کی دھمکی دے دی، امریکا کا ردعمل
The news is by your side.

Advertisement

شمالی کوریا نے جوہری پروگرام دوبارہ شروع کرنے کی دھمکی دے دی

پیانگ یانگ: امریکی پابندیوں کے نتیجے میں شمالی کوریا نے دوبارہ جوہری پروگرام شروع کرنے کی دھمکی دے دی۔

تفصیلات کے مطابق شمالی کوریا حکام نے امریکا کو دھمکی دیتے ہوئے کہا ہے کہ اگر وہ اپنی اقتصادی پابندیاں ختم نہیں کرتا تو ہم جوہری پالیسی بحال کردیں گے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق شمالی کوریا کے وزارت خارجہ کا کہنا ہے کہ اگر امريکا اس ملک پر عائد اقتصادی پابندياں ختم نہيں کرتا، تو جوہری ہتھيار تيار کرنے کی پاليسی بحال کرنے پر سنجيدگی سے سوچا جا سکتا ہے۔

وزارت خارجہ کے مطابق امریکا کے ساتھ بہتر تعلقات چاہتے ہیں لیکن تعلقات ميں بہتری اور پابندياں بيک وقت جاری نہيں رہ سکتے۔

شمالی کوریا نے اپنے جوہری تجربہ گاہ کے انہدام کے بعد بین الاقوامی معائنہ کاروں کو معائنے کی اجازت دے رکھی ہے، تاہم اس دھمکی کو بہت سنجیدہ لیا جارہا ہے۔

خیال رہے کہ 8 اکتوبر کو امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو نے مختصر دورے کے دوران کم جونگ سے ملاقات کی تھی، انہوں نے بتایا تھا کہ معائنہ کاروں کی ٹیم میزائلوں کے انجن ٹیسٹ کرنے کی تنصیب اور جوہری تجربات کے مقام کا دورہ کرے گی، یہ دورہ فریقین کے بیچ لوجسٹک امور پر اتفاق رائے ہونے کے فوری بعد کیا جائے گا۔

شمالی کوریا حکام کے مطابق انہوں نے گزشتہ برس اپنا جوہری اور بیلسٹک میزائل پروگرام ترک کر دیا تھا۔

یاد رہے کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ اور شمالی کوریا کے سربراہ کم جونگ ان کے مابین رواں سال جون کے مہینے میں سنگاپور میں ملاقات ہوئی تھی، ملاقات کے بعد ٹرمپ نے کہا تھا کہ اب شمالی کوریا سے کسی قسم کا جوہری خطرہ نہیں ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں