The news is by your side.

Advertisement

نیوکلیئر سپلائرز گروپ اجلاس کے ایجنڈے میں بھارت کی رکنیت کا معاملہ شامل نہیں، چین

بیجنگ : چینی وزارت خارجہ کا کہنا ہے کہ نیوکلئیر سپلائرز گروپ میں نئے ممالک کی شمولیت کے معاملے پر رکن ممالک میں اب تک اختلاف رائے پایا جاتا ہے جب کہ سیؤل میں ہونے والے اجلاس کے ایجنڈے میں بھارت شامل نہیں ہے.

تفصیلات کے مطابق چین کے وزارت خارجہ کے ترجمان ہوا چنینگ کا کہنا ہے کہ نیوکلئیر سپلائرز گروپ کے رکن ممالک جوہری عدم پھیلاؤ کے معاہدے (این پی ٹی ) پر دستخط نہ کرنے والے ممالک کے معاملے پر اب بھی تذبذب کا شکار ہیں.

اُن کا کہنا تھا کہ امید ہے کہ رکن ممالک موثر بات چیت کے بعد کسی حتمی نتیجے پر پہنچیں گے تاہم سیؤل میں ہونے والے اجلاس کے ایجنڈے میں بھارت کی رکنیت کا معاملہ شامل نہیں ہے.

انہوں نے کہا کہ این ایس جی اجلاس میں کسی نئے رکن کو شامل کرنے کے حوالے سے کوئی موضوع زیر بحث نہیں تاہم جوہری عدم پھیلاؤ کے معاہدے پر دستخط نہ کرنے والے ممالک کو این ایس جی میں شامل کرنے پرہمیں تحفظات ہیں.

*بھارت کی نیوکلئیر سپلائرگروپ میں شمولیت ، پاکستان سمیت کسی ملک نے مخالفت نہیں کی، سشما سوراج

یاد رہے کہ دو روز قبل بھارتی وزیرخارجہ سشما سوراج نے دعویٰ کیا تھا کہ چین این ایس جی گروپ میں بھارت کی شمولیت کا مخالف نہیں ہے.

واضح رہے کہ بھارتی سیکرٹری خارجہ جے شنکر نے سولہ اورسترہ جون کو چین کا غیراعلانیہ دورہ بھی کیا تھا جس میں انہوں نے بھارت کو نیوکلئیر سپلائرز گروپ میں شامل کرنے کے لیے چین کو قائل کرنے کی کوشش کی تھی.

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں