The news is by your side.

Advertisement

پاکستان میں کرونا وائرس کے کیسز کی تعداد 458 ہو گئی

اسلام آباد: پاکستان میں کرونا وائرس کے کیسز کی تعداد 458 ہو گئی ہے، وائرس سے مجموعی طور پر 3 افراد جاں بحق جب کہ 5 مریض صحت یاب ہو چکے ہیں۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق ملک میں کرونا وائرس کے مریضوں کی تعداد ساڑھے چار سو سے بڑھ گئی ہے، سندھ میں اب تک کرونا کے 245، بلوچستان میں81 کیسز رپورٹ ہوئے ہیں۔

ترجمان پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ کیئر کے مطابق پنجاب میں 80 کیسز رپورٹ ہوئے، دوسری طرف خیبر پختون خوا میں 23 کرونا کیسز کی تصدیق کی جا چکی ہے، گلگت بلتستان میں کرونا کے 21 اور آزاد کشمیر میں ایک کیس کی تصدیق ہوئی ہے، جب کہ اسلام آباد میں کرونا کے 7 کیسز سامنے آ چکے ہیں۔

گزشتہ 24 گھنٹوں میں ملک میں کرونا وائرس کے مزید 117 کیسز سامنے آئے، وزیر صحت پنجاب یاسمین راشد نے اے آر وائی نیوز سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ پنجاب میں جو کیسز سامنے آئے سب کی ٹریول ہسٹری ہے، تفتان سے 60 مریض آئے جب کہ دیگر یورپ سے آئے ہیں، تمام صوبے محنت کر رہے ہیں، انشاء اللہ جلد وبا پر قابو پالیں گے، 2 روز میں صورت حال واضح ہو جائے گی۔

کراچی میں کرونا وائرس سے پہلا مریض جاں بحق، ملک میں اموات 3 ہو گئیں

ترجمان پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ کیئر کا کہنا تھا کہ 55 زائرین، 15 لاہور، 2 ملتان، 3 مظفر گڑھ کے مریضوں کی تصدیق ہوئی ہے، ایک راولپنڈی، 4 گجرات کے مریضوں میں کرونا وائرس کی تصدیق ہوئی، تمام کنفرم مریض آئسولیشن میں ہیں۔

ادھر گلگت بلتستان میں کرونا وائرس کے کیسز کی تعداد 21 ہو گئی ہے، ترجمان جی بی فیض اللہ فراق نے بتایا کہ 2 مقامات پر اسکریننگ سینٹرز قائم کیے جا چکے ہیں، جہاں ہر روز 20 افراد کا مقامی سطح پر ٹیسٹ کیا جاتا ہے، 200 سے زائد زائرین گلگت بلتستان پہنچ چکے ہیں، اسکردو میں حکومتی اخراجات پر ہوٹلز قرنطینہ قرار دیے گئے ہیں، مختلف ہوٹلوں کے 500 کمرے زائرین کے لیے مختص کیے گئے ہیں، گلگت بلتستان میں 21 دن کے لیے دفعہ 144 بھی نافذ ہے، سیاحوں پر بھی پابندی ہے۔

ادھر آج کراچی میں کرونا وائرس سے پہلا مریض انتقال کر گیا ہے جس کی عمر 77 سال تھی، اور وہ کینسر اور شوگر کا بھی مریض تھا، وزیر صحت عذرا پیچوہو نے بتایا کہ کراچی میں کرونا وائرس کے 93 کیس رپورٹ ہو چکے ہیں، جب کہ سندھ بھر میں کرونا کے مریضوں کی تعداد 245 ہو چکی ہے، 241 مریض سندھ کے مختلف اسپتالوں میں زیر علاج ہیں، جن میں سے کراچی میں 90 اور سکھر میں 151 مریض زیر علاج ہیں۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں