The news is by your side.

Advertisement

مقبوضہ کشمیر کی جیلوں میں غیر انسانی سلوک، حریت رہنما اور قیدی بھوک ہڑتال پر چلے گئے

سری نگر: مقبوضہ کشمیر کی جیلوں میں قید حریت رہنماؤں نے جعلی مقدمات اور بلاجواز گرفتاریوں کے خلاف بھوک ہڑتال کا آغاز کردیا، میر واعظ عمر فاروق نے بھارتی کشیدگی پر تشویش کا اظہار کیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق مقبوضہ کشمیرمیں میرواعظ عمر فاروق کی سرپرستی میں قائم حریت فورم نے بھارتی فوج کی جانب سے لائن آف کنٹرول کے پونچھ اور راجوری سیکٹروں پر بڑھتی ہوئی کشیدگی پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ دونوں ممالک کو کشیدگی ختم کرنی چاہیے کیونکہ اس سے بھاری جانی و مالی نقصان ہورہا ہے۔

حریت فورم نے اپنے ایک جاری میں کہا کہ پاک بھارت کشیدگی کی سب سے بڑی وجہ کشمیر کا تنازع ہے، لہذا اس مسئلے کو کشمیری عوام کی خواہشات اور امنگوں کے مطابق فوری حل کرنا چاہیے، جب تک اس تنازع کو حل نہیں کیا جائے گا تب تک بھارت اور پاکستان کے درمیان مسائل حل نہیں ہوں گے اور کشیدگی کا سلسلہ جاری رہے گا۔

مزید پڑھیں: مقبوضہ کشمیر، بھارتی فوج کی گاڑی نے 13سالہ لڑکے کو کچل دیا

کشمیر میڈیا سروس کی رپورٹ کے مطابق حریت فورم نے کٹھ پتلی انتظامیہ سے کشمیر ہائی وے کی بندش کاحکم واپس لینے کا بھی مطالبہ کیا ۔ اعلامیے میں بتایا گیا ہے کہ سری نگر سینٹرل جیل میں نظربند کشمیریوں نے حال ہی میں جو واقعہ پیش آیا اُس کے بعد سے  اپنے خلاف درج مقدمات واپس لینے اور دیگر مطالبات کے لیے بھوک ہڑتال شروع کردی۔

کشمیر ہائی کورٹ بار ایسوسی ایشن کے وکلا پر مشتمل پانچ رکنی ٹیم نے اپنی رپورٹ میں کہا ہے کہ ’’قیدیوں کو اہل خانہ سے ملاقات کی اجازت نہیں دی جارہی جبکہ اُن پر مظالم بھی ڈھائے جارہے ہیں جس کے باعث اُن کی جانوں کو شدید خطرات لاحق ہیں‘‘۔ جیلوں میں نظربند کشمیریوں کے اہل خانہ نے قیدیوں کی جانوں کو درپیش خطرات کے خلاف پریس انکلیو سری نگر میں احتجاجی مظاہرہ کیا جس میں اُنہوں نے مطالبہ کیا کہ قیدی جیلوں میں محفوظ نہیں ہیں۔  مظاہرین نے قابض انتظامیہ پر زور دیا کہ کشمیر کی جیلوں کو کو گوانتاناموبے میں تبدیل نہ کرے۔

یہ بھی پڑھیں: مقبوضہ کشمیر‘بھارتی فوجیوں کا متعدد افراد پرتشدد اوردکانوں کی لوٹ مار

دوسری جانب حریت رہنما محمد اشرف صحرائی نے سری نگر سینٹرل جیل میں قید کشمیریوں کے ساتھ غیر انسانی سلوک کی شدید مذمت کرتے ہوئے عالمی برادری سے نوٹس لینے کی اپیل بھی کی۔ دریں اثناء سری نگر جموںشاہراہ پرسی آر پی ایف کانوائے کی نقل وحرکت کے دوران بھارتی فوجیوں کی طرف سے روکی گئی ایمبولیس میں موجود کینسر کا مریض سڑک پر ہی دم توڑ گیا، مرحوم کی شناخت عبدالقیوم بانڈے کے نام سے ہوئی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں