عمران خان نے آف شور کمپنی پرالیکشن کمیشن میں جواب جمع کرادیا -
The news is by your side.

Advertisement

عمران خان نے آف شور کمپنی پرالیکشن کمیشن میں جواب جمع کرادیا

اسلام آباد : چیئرمین پی ٹی آئی عمران خان نے آف شور کمپنی اور مبینہ ٹیکس چوری کی تحقیقات کی درخواست پر الیکشن کمیشن میں جواب جمع کرادیا، جواب میں عمران خان نے ٹیکس چوری اورمنی لانڈرنگ کے الزامات مسترد کر دیئے۔

آف شور کمپنی اور مبینہ ٹیکس چوری کی تحقیقات کی درخواست پر عمران خان نے الیکشن کمیشن میں جواب جمع کرادیا ہے، عمران خان نے اپنے جواب میں کہا کہ ٹیکس چوری، منی لانڈرنگ کے الزامات بے بنیاد اور غلط ہیں۔

عمران خان نے جواب میں بتایا کہ لندن فلیٹ بیرون ملک آمدن سے ایک لاکھ سترہ ہزار پاؤنڈ میں خریدا، بنی گالہ کی زمین تینتالیس کروڑ پچاس لاکھ روپے میں قسطوں پرخریدی تھی، بنی گالہ اراضی کی پیشگی رقم پینسٹھ لاکھ روپے اپنے ذرائع سے ادا کی۔

عمران خان کی جانب سے جمع کرائے گئے جواب میں بتایا گیا کہ لندن فلیٹ کی فروخت میں تاخیر پر جمائما نے بنی گالہ اراضی کی رقم ادا کی، مارچ دوہزار تین میں لندن فلیٹ کی رقم جمائما کو دے دی‌۔


مزید پڑھیں : عمران خان کی لیگل فرم نے آف شور کمپنی کے الزامات کو مسترد کردیا


جواب میں بتایا گیا کہ لندن کا فلیٹ سات لاکھ پندرہ ہزار پاؤنڈ میں فروخت ہوا، ٹیکس کٹ کرکے چھ لاکھ نوے ہزار تین سو سات پاؤنڈ ملے، اثاثوں سے متعلق کوئی غلط بیانی نہیں کی، تحریک انصاف پر لگے الزامات کا جواب پارٹی کا وکیل دے گا۔

یاد رہے کہ  سپریم کورٹ نے آف شورکمپنیوں سے متعلق تحقیقات کیلئے مسلم لیگ ن کے رہنما حنیف عباسی کی درخواست پرچیئرمین پی ٹی آئی عمران خان اور جہانگیر ترین کو جواب داخل کرانے کے لیے 2 ہفتوں کی مہلت دیدی ہے۔


مزید پڑھیں : آف شور کمپنی کیس، عمران خان کو جواب جمع کرانے کیلئے مزید مہلت مل گئی


خیال رہے کہ ن کے رہنما حنیف عباسی کی جانب سے آف شور کمپنیوں سے متعلق تحقیقات کی درخواست پرعمران خان اور جہانگیر ترین کو جواب داخل کرانے کے لیے کہا گیا تھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں