site
stats
پاکستان

آف شورکمنپیزکا پیسہ واپس لانے کی تیاریاں، سرمایہ کاروں کو چُھوٹ

اسلام آباد : کالےدھن کو سفید کرنے کی ایک اوراسکیم لانےکی تیاری کر لی گئی، اس حوالے سے متعلقہ اداروں سے تجاویزبھی طلب کر لی گئی ہیں، پانامہ کا پیسہ واپس لانے پرسزا کے بجائے چھوٹ ملےگی۔ آف شور کمپنیز میں لگا سرمایہ پاکستان آنے کا جوازپیش کیا جائے گا۔ پاکستان تحریک انصاف نے حکومتی فیصلے کی مذمت کردی۔

تفصیلات کے مطابق آف شور کمپنیز میں لگایا جانے والا سرمایہ پاکستان میں لانے کی تیاریاں کی جارہی ہیں، رقوم واپس لانے کے لیے سرمایہ کاروں کو ون ٹائم چھوٹ دی جائے گی، پانامہ کا پیسہ واپس لانے پرسرمایہ کار کو سزا دینے کی بجائے رعایت دینے کی اسکیم بنائی گئی ہے۔

سرکاری ذرائع کا کہنا ہے کہ قانونی طریقہ کار سے سرمایہ لانے میں تاخیر اور پیچیدگیاں ہوسکتی ہیں،اسکیم کا مقصد یہ ہے کہ طریقہ کارآسان بنایا جائے تاکہ بیرونی سرمایہ وطن واپس آسکے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ اسکیم میں خصوصی پیکج کے لیے سرمایہ کاروں کو چھوٹ دینے پرغور کیا جا رہاہے۔ حکومت کی جانب سے متعلقہ اداروں سے تجاویز طلب کرلی گئیں ہیں، اسکیم کیلیے محکمہ خزانہ، سرمایہ کاری بورڈ اور فیڈرل بورڈ آف ریونیو سے تجاویز طلب کی گئیں ہیں۔ اس کے علاوہ اسٹیٹ بینک اور ایف آئی اے سے بھی تجاویز طلب کی گئیں۔

سرکاری ذرائع کے مطابق پیکج غیرملکی سرمایہ کاری پاکستان لانے کی حوصلہ افزائی کرے گا۔ پاکستان تحریک انصاف نے حکومت کے اس فیصلے کی سختی سے مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ حکومت کے اس اقدام سے کالے دھن کو سفید کرنے میں مدد ملے گی۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top