The news is by your side.

مہنگائی سے پریشان عوام کے لئے نئی مشکل ، بجلی کے بعد گیس مہنگی ہونے کا امکان

اسلام آباد : سندھ اور بلوچستان کیلئے گیس مہنگی ہونے کا امکان ہے ، سوئی سدرن نے گیس ٹیرف 667.44 روپے فی ایم ایم بی ٹو بڑھانے کی درخواست کردی۔

ایس ایس جی سی ایل کی پٹیشن پر اوگرا کی جانب سے عوامی سماعت کا انعقاد کیا گیا ، ترجمان اوگرا نے بتایا کہ پٹیشن مالی سال23-2022کیلئے قیمتوں کےتعین کیلئے 14 اکتوبر کو دائر کی گئی تھی۔

ترجمان کا کہنا تھا کہ تمام اسٹیک ہولڈرز اور صارفین کو مدعوکیا گیا تاکہ درخواست پرنقطہ نظر پیش کر سکیں، سماعت میں تمام متعلقہ اسٹیک ہولڈرز نے شرکت کی اور اپنا نقطہ نظر پیش کیا۔

اوگرا نے کہا کہ ایس ایس جی سی ایل نےمالی ضروریات میں184,881 ملین روپے کا خسارہ ظاہر کیا، ایس ایس جی سی ایل نے اوسط قیمت میں 667.44 روپے فی ایم ایم بی ٹی یو اضافے کی درخواست کی۔

مالی سال23-2022 کیلئے آر ایل این جی کی مد میں 26.23 روپےفی ایم ایم بی ٹی یو کا تخمینہ لگایا، اوگرا نے تمام اسٹیک ہولڈرز کو منصفانہ موقع فراہم کیا تاکہ وہ اپنا نقطہ نظرپیش کرسکیں۔

چیرمین اوگرا نے متعلقہ اسٹیک ہولڈرز کی تجاویز سن کر فیصلہ محفوظ کیا جو بعد میں سنایا جائے گا۔

سوئی سدرن نےگیس ٹیرف 96.36 فیصد تک بڑھانے کی درخواست کر رکھی ہے ، اس وقت سوئی سدرن کا اوسط گیس ٹیرف 692.63 روپے مقرر ہے۔

یاد رہے سوئی سدرن نے گیس ٹیرف 667.44 روپے فی ایم ایم بی ٹو بڑھانے کی درخواست کی ، اس وقت سوئی سدرن کا اوسط گیس ٹیرف692.6روپے مقرر ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں