The news is by your side.

Advertisement

اوگرا نے پیٹرول کی زیادہ قیمتوں پر فروخت کا نوٹس لے لیا

اسلام آباد: آئل اینڈ گیس ریگولیٹری اتھارٹی (اوگرا) نے ہائی اوکٹین پیٹرول کی زیادہ قیمتوں پر فروخت کا نوٹس لے لیا۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق آئل مارکیٹنگ کمپنیوں کے گٹھ جوڑ سے پیٹرول غائب ہونے کے بعد اب پیٹرول زیادہ قیمتوں پر فروخت کیا جانے لگا ہے، جس پر اوگرا نے نوٹس لے لیا ہے۔

ترجمان اوگرا عمران غزنوی نے کہا ہے کہ آئل مارکیٹنگ کمپنیز سے ہائی اوکٹین پیٹرول پر وضاحت طلب کی گئی ہے، اوگرا نے ہدایت کی ہے کہ صارفین کے مفاد کے تحفظ کے لیے فوری اقدامات کیے جائیں۔

ترجمان نے کہا کمپنیاں ہائی اوکٹین پیٹرول کی مناسب قیمت مقرر کریں، عالمی منڈی میں پیٹرولیم مصنوعات قیمتوں میں نمایاں کمی ہوئی ہے، صارفین کو ہائی اوکٹین کی قیمتوں میں کمی کا فائدہ منتقل کیا جائے۔

ملک بھر میں پیٹرول کا بحران سنگین صورت اختیار کرگیا

عمران غزنوی کا کہنا تھا کہ مسابقتی کمیشن بھی پیٹرول کی زیادہ قیمتوں پر فروخت پر نوٹس لے چکا ہے۔

یاد رہے کہ پیٹرولیم مصنوعات سستی کے ہونے کے بعد مارکیٹنگ کمپنیوں نے گٹھ جوڑ کر کے پیٹرول ہی غائب کر دیا تھا جس کے بعد پیٹرول کا بحران پیدا ہو گیا، جس پر گزشتہ روز اوگرا نے نوٹس لیا اور آئل مارکیٹنگ کمپنیوں کو شوکاز نوٹس جاری کیے گئے۔

تاہم کراچی سمیت ملک بھر میں پیٹرول اور ڈیزل کا بحران جاری ہے، چئیرمین آل پاکستان پیٹرولیم ریٹیلرز ایسوسی ایشن سمیر نجم الحسن کا کہنا ہے کہ آئل کمپنیوں کے پاس صرف 3 روز کا اسٹاک رہ گیا ہے، مسلسل کوٹے میں کمی ہو رہی ہے اور نیا کوٹا خریدا نہیں جا رہا، پی ایس او کے علاوہ کسی بھی آئل کمپنی کی جانب سے تیل کی خریداری نہیں کی جا رہی جس کی وجہ سے اتوار تک صورت حال مزید خراب ہو جائے گی۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں