The news is by your side.

Advertisement

کراچی طیارہ حادثہ، اسلامی تعاون تنظیم کا اظہارِ افسوس

ابو ظبی: اسلامی تعاون تنظیم (او آئی سی) کے سیکریٹری جنرل ڈاکٹر یوسف التھائی مین نے طیارہ حادثے پر افسوس کا اظہار کیا ہے۔

او آئی سی کی جانب سے جاری اعلامیے میں سیکریٹری جنرل کا کہنا تھا کہ ’طیارہ حادثے پر پاکستان سے دلی تعزیت اور اظہارِ یکجہتی کرتے ہیں‘۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان انٹرنیشنل ایئرلائنز (پی آئی اے) کا طیارہ 22 مئی 2020 کراچی ایئرپورٹ کے قریب آبادی والے علاقے میں گر کر تباہ ہوا، انسانی جانوں کے ضیاع پر او آئی سی کے تمام ممالک کو افسوس ہے۔

قبل ازیں افغان صدر، بھارتی اور کینیڈین وزرائے اعظم سمیت دیگر ممالک کے وزرائے خارجہ نے بھی طیارہ حادثے پر پاکستان سے افسوس کا اظہار کیا۔

سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر ٹویٹ کرتے ہوئے افغان صدر اشرف غنی کا کہنا تھا کہ طیارہ حادثے میں جاں بحق ہونے والوں کے لواحقین کے دکھ میں شریک ہیں، غم کے اس موقع پر افغان قوم پاکستان کے ساتھ ہے۔

مزید پڑھیں: طیارہ حادثہ، افغان صدر، بھارتی اور کینیڈین وزرائے اعظم سمیت دیگر ممالک کا اظہار افسوس

بھارتی وزیر اعظم نریندر مودی نے اپنے تعزیتی پیغام میں کہا ہے کہ ’پاکستان میں طیارہ حادثے سے قیمتی جانوں کے ضیاع پر دکھ ہوا، لواحقین سے تعزیت اور زخمیوں کی جلد صحت یابی کے لیے دعا گو ہیں’۔

کینیڈین وزیر اعظم جسٹن ٹروڈو نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر طیارہ حادثے پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے لکھا کہ ’آج صبح پاکستان سے ملنے والی خبر چونکا دینے والی ہے، پی کے 8303 میں اپنے پیاروں کو کھونے والوں سے ہمدردی ہے، اس خوفناک حادثے کے تمام متاثرین کے دکھ میں شریک ہیں، کینیڈین عوام آج آپ کو اپنی دعاؤں میں یاد رکھیں گے‘۔

علاوہ ازیں کینیڈا،سوئٹزرلینڈ،نیدرلینڈ،سری لنکا کے وزرائےخارجہ نے شاہ محمود قریشی سے بذریعہ ٹیلی فون رابطہ کیا اور  طیارہ حادثے پر دکھ اور افسوس کا اظہار کیا۔ وزرائےخارجہ نےقیمتی جانوں کےضیاع  پر پاکستان کیساتھ اظہاریکجہتی کیاْ  وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی نے اظہار یکجہتی پر چاروں وزرائے خارجہ کا شکریہ ادا کیا۔

طیارہ حادثہ

واضح رہے کہ پی آئی اے کا طیارہ کراچی ایئرپورٹ کے قریب گر کر تباہ ہوا جس کے نتیجے میں متعدد مسافر اور علاقہ مکین جاں بحق ہوئے، حادثے کی جگہ سے لاشوں اور زخمیوں کو اسپتال منتقل کرنے کا سلسلہ جاری ہے جبکہ وزیراعظم نے طیارہ حادثے کی فوری تحقیقات کا حکم دے دیا ہے۔

ترجمان پی آئی اےجبکہ سول ایوی ایشن کا کہنا ہے کہ پی آئی اے کےطیارے میں 99مسافر اور 8 کریو ممبر سوار تھے۔ ڈی آئی جی نعمان صدیقی کا کہنا ہے کہ طیارہ گرنے سے زمین پر 4 گھر تباہ ہوئے ہیں ،  طیارہ گرنے کی جگہ کوگھیراؤکرکے مکمل سیل کردیا گیا ۔

طیارہ حادثے میں معجزانہ طور پر بچ جانے والے مسافر

سندھ حکومت کے ترجمان مرتضیٰ وہاب نے اپنے ٹویٹ میں بتایا کہ طیارہ حادثے میں دو مسافر معجزاتی طور پر محفوظ رہے جن میں بینک آف پنجاب کے ظفر مسعود اور محمد زبیر ہیں۔

انہوں نے بتایا کہ دونوں زخمیوں کا جسم جھلسا ہوا ہے البتہ ڈاکٹرز نے اُن کی حالت خطرے سے باہر قرار دی ہے۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں