The news is by your side.

Advertisement

خام تیل کی قیمت 55ڈالر فی بیرل تک جا پہنچی

نیویارک : عالمی منڈی میں خام تیل کی قیمت میں اضافے کا رجحان جاری ہے ، خام تیل کی قیمت پچپن ڈالر فی بیرل تک جا پہنچی، درآمدی ممالک میں بھی پیٹرولیم مصنوعات مہنگی ہونے کا امکان ہے۔

ایشیائی منڈیوں میں برینٹ خام تیل کی قیمت سترہ سینٹس اضافے کے بعد پچپن ڈالر فی بیرل ہوگئی جبکہ امریکی خام تیل کی قیمت بتیس سینٹس اضافے کے ساتھ تریپن ڈالر چالیس سینٹس ہوگئی ہے۔

معاشی تجزیہ کاروں کے مطابق اوپیک اور نان اوپیک ممالک کے درمیان خام تیل کی پیداوار میں کمی کے معاہدے پر اطلاق یکم جنوری سے ہوگا، مارکیٹ میں خام تیل کی قیمتوں میں اضافہ اسی کمی کے باعث ہورہا ہے۔

دوسری جانب خام تیل درآمد کرنے والے ممالک میں پیڑولیم مصنوعات مہنگی ہوجانے کا امکان ہے، پاکستان میں بھی پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں دو روپے تک اضافے کا خدشہ ہے۔

اوگرا کی جانب سے پیٹرول کی قیمت میں ایک روپیہ اٹھائیس پیسے ، ڈیزل ایک روپےاکتیس پیسے جبکہ ہائی اوکیٹن دو روپے فی لیٹر مہنگا کرنے کی تجویز دی گئی ہے۔


مزید پڑھیں : اوپیک کا 8سالوں میں پہلی مرتبہ تیل کی پیداوار میں کمی کا فیصلہ


خیال رہے کہ غیر اوپیک ممالک اور اوپیک ممالک کے درمیان 8سال بعد پہلی بار پیداوار میں متفقہ کمی کا فیصلہ ہوا ہے۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں