The news is by your side.

اوکاڑہ : طلباء وطالبات کی نازیبا ویڈیوزبنا نے والا اسکول پرنسپل گرفتار

اوکاڑہ : پولیس نے طلباء و طالبات کی نازیبا ویڈیو بنانے والے اسکول پرنسپل کو حراست میں لے لیا، ملزم کے قبضے سے ویڈیوز برآمد کر کے دہشت گردی ایکٹ کے تحت مقدمہ درج کرلیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق سرگودھا اور قصور ویڈیو اسکینڈل کے بعد اب پنجاب کے ایک اور شہر میں بھی بچوں کی نازیبا ویڈیوز بنائے جانے کا انکشاف ہوا ہے، ملزم بچوں کی ویڈیوز بنا کر انہیں بلیک میل کیا کرتا تھا۔

اوکاڑہ کے حجرہ شاہ مقیم کے ایک اسکول پرنسپل کی جانب سے طلباء و طالبات کی قابل اعتراض ویڈیوز بنائے جانے کی اطلاع پر پولیس نے اس کے دفترپر چھاپہ مارا۔

چھاپے کے دوران ملزم یوسف کے قبضے سے طلبا وطالبات کی نازیبا ویڈیوز برآمد کر لی گئیں، پولیس نے ملزم یوسف کو گرفتارکرکے اس کیخلاف مقدمہ درج کرلیا، مقدےمیں دہشت گردی ایکٹ سمیت مختلف دفعات شامل کی گئیں ہیں، پولیس کے مطابق ملزم سے مزید تفتیش کی جارہی ہے۔


مزید پڑھیں: سرگودھا، بچوں کی نازیبا فلمیں بنانے والا ملزم گرفتار


واضح رہے کہ اس سے قبل مشہور قصور ویڈیو اسکینڈل کے علاوہ سرگودھا میں بھی معصوم بچوں کی قابل اعتراض ویڈیوز بنا کر انہیں فروخت کیے جانے کی اطلاعات ملتی رہی ہیں۔

ایف آئی اے نے سرگودھا میں کارروائی کر کے بچوں کی نازیبا فلمیں بنانے اور ان کی ترسیل کا کام کرنے والے ملزم سعادت امین کو گرفتار کیا تھا اور اب اس قسم کا واقعہ اوکاڑہ میں بھی رونما ہوا ہے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں‘مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔ 

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں