The news is by your side.

Advertisement

کراچی پولیس نے شہری کو ڈاکو سمجھ کر گولیاں مار دیں، وزیراعلیٰ سندھ کا نوٹس

کراچی : آئی آئی چندریگرروڈ پر پولیس نے شہری کو ڈاکو سمجھ کر گولیاں مار دیں، واقعے میں ملوث تینوں اہلکار کو زیرحراست لے لیا گیا ہے جبکہ وزیراعلیٰ سندھ نے آئی جی پولیس سے واقعے کی تفصیلی رپورٹ طلب کرلی ہے۔

تفصیلات کے مطابق کراچی پولیس شہریوں کی جان کی دشمن بن گئی، کراچی کے علاقے آئی آئی چندریگرروڈپر پولیس نے شہری کو ڈاکو سمجھ کر گولیاں مار دیں، واقعے میں اسلم نامی شخص جاں بحق اور وقار نامی شہری زخمی ہوا۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ 2 دوست اپنی اپنی موٹرسائیکل پرسوار تھے اور موٹرسائیکلیں روک کرآپس میں مل رہے تھے کہ موقع پرموجودپولیس اہلکاروں نےڈکیت سمجھ کرگولیاں مار دیں اور پولیس اہلکارزخمیوں کواسپتال چھوڑ کر فرار ہوگئے۔

ڈی آئی جی ساؤتھ جاویداکبرریاض نے کہا کہ فائرنگ مددگار 15میٹھادر کی پولیس نےمشکوک جانتے ہوئے کی، مددگار15 پولیس کےتینوں اہلکاروں سےتفتیش جاری ہے، ایس ایس پی سٹی مقدس حیدرواقعےکی تحقیقات کر رہے ہیں، فائرنگ سےاسلم نامی شخص ہلاک جبکہ وقارنامی شخص زخمی ہوا۔

ڈی آئی جی سیکیورٹی اینڈایمرجنسی سروسز نے آئی آئی چندریگرروڈفائرنگ واقعے کا نوٹس لیتے ہوئے ایس پی مددگار15عبداللہ میمن سے پولیس اقدامات پر مشتمل تفصیلات طلب کرلیں۔

پولیس نے کہا کہ آئی آئی چندریگرروڈ پر پولیس فائرنگ کے واقعے میں تینوں اہلکار کو زیرحراست لے لیا گیا ہے۔

وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے آئی آئی چند ریگرروڈ پر پولیس فائرنگ سے شہری کی موت کا نوٹس لیتے آئی جی پولیس سےواقعے کی تفصیلی رپورٹ طلب کرلی اور کہا کہ ایسے واقعات کسی صورت قبول نہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں