The news is by your side.

Advertisement

اورنگی ٹاؤن میں 3 افراد کا قاتل پولیس اہلکار نکلا، ملزم گرفتار، اسلحہ برآمد

کراچی : اورنگی ٹاؤن میں فائرنگ کے واقعے میں دو بھائیوں سمیت تین افراد کے قتل میں ملوث ملزم کو پولیس نے گرفتار کرلیا، ملزم  تنویر پولیس اہلکار ہے ،  آلہ قتل برآمد کرکے مقدمہ درج کرلیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق کراچی کے علاقے اورنگی ٹاؤن میں گزشتہ روز ہونے والے تہرے قتل کا معمہ حل ہوگیا، پولیس نے شبے کی بنیاد پر ملزم کو گرفتار کیا، ابتدائی طور پولیس نے پوچھ گچھ کی تو اس نے قتل کا اعتراف کرلیا۔

اس حوالے سے  میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ایس ایس پی ویسٹ نے بتایا کہ دوران تفتیش انکشاف ہوا کہ ملزم تنویر ہی تہرے قتل کا مرکزی ملزم ہے، گرفتارملزم تنویر سمن آباد انویسٹی گیشن ڈپارٹمنٹ میں تعینات ہے، ملزم نے ڈیڑھ لاکھ روپے کے تنازع پر3افراد کو قتل کیا۔

تفصیلات سے آگاہ کرتے ہوئے ایس ایس پی کا کہنا تھا کہ ملزم پولیس اہلکار نے مقتول ندیم سے ڈیڑھ لاکھ روپے کا پلاٹ خریدا تھا، مقتول ندیم نے اس سے مزید رقم کا مزید تقاضہ کیا جس پر دونوں میں تلخ کلامی ہوگئی۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ اسی بات پر ملزم کی ندیم سے لڑائی ہوئی، ملزم نے دیگر دو افراد کو شواہد ختم کرنے کیلئے قتل کیا، جس اسلحے سے فائرنگ کی گئی وہ غیرقانونی تھا۔

پولیس نے ملزم کے قبضے سے آلہ قتل بھی برآمد کرلیا ہے، ایس ایس پی ویسٹ کے مطابق یہ قتل دشمنی کا شاخسانہ ہے، واضح رہے کہ ملزم تنویر  نے گزشتہ روز رقم کے تنازعے پر  اورنگی ٹاون نمبر14پاکستان بازار میں پہاڑی پر واقع گھر میں فائرنگ کرکے دو بھائیوں سمیت3افراد کو قتل کیا تھا۔

مزید پڑھیں: کراچی کے علاقے اورنگی ٹاؤن میں فائرنگ سے 3 افراد جاں بحق

پولیس کے مطابق مقتولین نے اورنگی ٹاؤن میں پہاڑی پر ایک کمرہ بنا رکھا تھا جسے وہ استعمال کرتے تھے، ابتدائی معلومات کے مطابق ان کا آپس میں جھگڑا ہوا اور نوبت فائرنگ تک جا پہنچی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں