The news is by your side.

Advertisement

اورنگی ٹاؤن : پیاسے سڑکوں پر نکل آئے، رکن اسمبلی کو گھیر لیا، پولیس کا لاٹھی چارج

کراچی : پانی کی بوند بوند کو ترسے ہوئے مشتعل لوگوں نے اورنگی ٹاؤن میں سابق رکن اسمبلی کو گھیر کر مارنے کی کوشش کی، پولیس نے مظاہرین پر لاٹھی چارج کردیا۔

تفصیلات کے مطابق کراچی کے علاقے اورنگی ٹاؤن پندرہ نمبر میں پانی کی عدم دستیابی کیخلاف علاقہ مکینوں کی بڑی تعداد سڑکوں پر نکل آئی۔

مظاہرے کے دوران ایم کیو ایم سے منحرف ہونے والے پی ایس پی کے رہنما سیف الدین خالد بھی وہاں پہنچ گئے جہاں انہیں لینے کے دینے پڑگئے، مشتعل افراد نے سابق رکن اسمبلی کو گھیرلیا اور شدید نعرے بازی کی۔

اس موقع پر پاک سرزمین پارٹی کے رہنما کو لوگوں نے مارنے کی بھی کوشش کی، مشتعل خواتین ڈنڈے لے کر آگئیں، لوگوں نے ان پر پانی بیچنے کا الزام لگایا، مظاہرین سابق رکن اسمبلی کی ایک بات بھی سننے کو تیار نہ تھے۔

حالات کی نزاکت کو دیکھتے ہوئے کچھ لوگ سیف الدین خالد کو عوام کے نرغے سے بحفاظت نکال کر قریب ہی ایک دکان میں لے گئے، سیف الدین خالد نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ میں تویہاں مظاہرین کا ساتھ دینے آیا تھا لیکن شاید ان لوگوں کو اصل بات کا علم نہیں یا پھر ان کو سکھا کر بھیجا گیا ہے۔

اس سے قبل پانی کے لیے احتجاج کرنے والوں اور پولیس میں جھڑپ بھی ہوئی، پولیس لاٹھی چارج سے کچھ لوگ زخمی بھی ہوگئے، شہریوں کا کہنا تھا کہ قریبی پمپنگ اسٹیشن سے واٹر ٹینکرز بھر بھر کرجارہے ہیں جبکہ علاقہ میکن ماہ رمضان میں بھی پانی سے محروم ہیں۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں‘مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔ 

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں