The news is by your side.

Advertisement

غیر تصدیق شدہ ڈھائی لاکھ سے زائد اسلحہ لائسنس غیر قانونی قرار

کراچی: محکمہ داخلہ سندھ نے غیر تصدیق شدہ ڈھائی لاکھ سے زائد اسلحہ لائسنس غیر قانونی قرار دے دیے۔

وزرات داخلہ نے سندھ میں ڈھائی لاکھ سے زائد اسلحہ لائسنس تصدیق نہ ہونے کی وجہ سے غیر قانونی قرار دے دیے ہیں، سیکریٹری داخلہ کا کہنا ہے دس لاکھ نناوے ہزاراسلحہ لائسنسوں کی تصدیق کے لیے احکامات دیے گئےتھے جن میں سے ڈھائی لاکھ اسلحہ لائسنسوں کی تصدیق نہیں کرائی گئی، تمام غیر تصدیق شدہ اسلحہ لائسنسوں کی قانونی حیثیت ختم ہوچکی ہے۔

پڑھیں : ساڑھے 5 لاکھ اسلحہ لائسنس تاحال غیر تصدیق شدہ ہیں

قائم مقام سیکریٹری داخلہ ریاض سومرو نے یہ اطمینان دلایا کہ وزیر اعلی سے اسلحہ لائسنس کی تصدیق کے لیے تین ماہ کی مزید مہلت کی سفارش کی گئی ہے۔

سیکریٹری داخلہ کا کہنا ہے کہ سندھ کابینہ نے غیر تصدیق شدہ لائسنس کو منسوخ کرنے کی منظوری دی تھی،10 لاکھ 99 ہزار لائسنس کی تصدیق کے لیئےڈپٹی کمشنرز کو احکامات جاری کیے تھے ،ڈھائی لاکھ سے زائد لائسنس کی تصدیق نہیں کرائی گئی۔

پڑھیں :   ڈاکو کو مارنے پر آئی جی سندھ کا شہری کو پچاس ہزار روپے انعام

گزشتہ روز وزیر اعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے کہا تھا کہ سندھ حکومت کی جانب سے جاری کردہ اسلحہ لائسنس میں سے 5 لاکھ سے زائد لائسنس کی تصدیق نہیں ہوسکی۔

انہوں نے اسلحہ لائسنس حاصل کرنے والے افراد سے اپیل کی کہ وہ اپنے اسلحہ لائسنس کی تصدیق کروالیں بصورت دیگر منسوخ کردیا جائے گا، وزیر اعلیٰ سندھ نے محکمہ داخلہ کو ویب سائٹ فعال کرنے کی بھی ہدایات جاری کیں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں