The news is by your side.

Advertisement

آکسفورڈ نے کرونا ویکسین کی آزمائش شروع کردی

لندن : معروف برطانوی یونیورسٹیوں نے جان لیوا کرونا وائرس کی ویکسین تین ماہ میں تیار کرلی، جس کی انسانوں پر آزمائش بھی شروع کردی گئی ہے۔

آکسفورڈ یونیورسٹی نے ویکسین کی تیاری کا کام 20 جنوری کو شروع کیا تھا اور اس کی تیاری میں آکسفورڈ جینر انسٹی ٹیوٹ اور آکسفورڈ ویکسین گروپ کلینکل ٹیمز نے حصہ لیا ہے جبکہ امپیرئل کالج نے بھی ویکسین تیار کی ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ کرونا وائرس کے خلاف بنائی گئی ویکسین کی آزمائش آٹھ سو افراد کی جائے گی تاہم پہلے مرحلے میں دو افراد پر اس کی آزمائش کی جائے گی جس میں ایک خاتون سائنسدان اور رضاکار مرد شامل ہیں۔

ذرائع کے مطابق آکسفورڈ یونیورسٹی اور امپیرئل کالج انتظامیہ کی جانب سے کہا گیا ہے کہ کامیابی کی صورت میں رواں برس کے اختتام تک ویکسین عوام کے لیے دستیاب ہوگی، برطانوی سائنسدانوں نے دعویٰ کیا ہے کہ ویکسین کی کامیابی کا امکان 80 فیصد ہے۔

برطانوی سائنس دانوں کا دعویٰ ہے کہ ویکسین قوت مدافعت کو مضبوط کرنے پر کام کرے گی۔

ویکسین کی آزمائش میں شامل ہونے کےلیے کئی سو رضاکاروں نے رجسٹریشن کروائی تھی، جن میں سے مذکورہ افراد کا انتخاب کیا گیا۔

خیال رہے کہ برطانیہ میں کرونا وائرس نے تباہی مچائی ہوئی ہے، اب تک برطانیہ میں اموات کی تعداد 18738 اور مریضوں کی تعداد 1 لاکھ 38 ہزار سے تجاوز کرگئی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں