The news is by your side.

Advertisement

چترال، نوجوان نے دریا میں گرنے والے مار خور کو بچالیا

پشاور: خیبرپختونخواہ کے ضلع چترال میں نوجوان نے دریا میں گرنے والے مارخور کو  بچا کر نئی مثال قائم کردی۔

اے آر وائی نیوز کی رپورٹ کے مطابق چترال سے بہنے والے دریا میں مارخور گرا جس کو بچانے کے لیے نوجوان نے اپنی جان کی پرواہ کیے بغیر چھلانگ لگائی اور اُس کو باحفاظت باہر نکال لیا۔

ترجمان پاکستان ہلال احمر خیبرپختونخواہ کے مطابق مارخور دریا سے پانی پی رہا تھا کہ اسی دوران وہ پانی میں گر گیا، پانی کے تیز بھاؤ کی وجہ سے وہ سنبھل نہیں سکا اور تیزی سے بہتا ہوا آگے کی طرف جانے لگا۔

اسی دوران نوجوان نے سارا منظر دیکھا تو اُس نے اپنی جان کی پرواہ کیے بغیر دریا میں چھلانگ لگائی، بعد ازاں وہ مار خور کو آہستہ آہستہ پتھروں کی طرف لے کر آیا اور اُسے باہر نکال دیا۔

ہلال احمر پاکستان خیبرپختونخواہ کے چیئرمین محمد حامد خان نے مار خور بچانے پر نوجوان کو شاباش دی اور اُس کے جذبے کی تعریب بھی کی۔

اُن کا کہنا تھا کہ پاکستان ہلال احمر ایسے رضاکاروں کو سلام پیش کرتی ہے، جو انسانیت کے لیے اعلیٰ مثال قائم کرتے اور جانفشانی کے ساتھ خدمت کرتے ہیں۔

مارخور کیا ہے؟

مارخور جنگلی بکرے کی ایک قسم ہے جو پاکستان میں گلگت بلتستان، ضلع چترال، وادی کالاش اور وادی ہنزا سمیت دیگر شمالی علاقوں کے علاوہ وادی نیلم کے بالائی علاقوں میں پایا جاتا ہے۔

اس کے علاوہ مارخور بھارت ، افغانستان ،ازبکستان،تاجکستان اور کشمیر کے کچھ علاقوں ميں بھی پايا جاتا ہے۔

قدرت اور قدرتی وسائل کی حفاظت کی عالمی تنظیم بین الاقوامی اتحاد برائے تحفظ قدرت کے مطابق اس نوع کو ان جانوروں میں شمار کیا جاتا ہے جن کا وجود خطرے میں ہے۔یاد رہے کہ مارخور پاکستان کا قومی جانور بھی ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں