پاک افغان سرحد دو روز کھلنے کے بعد دوبارہ غیر معینہ مدت کے لئے بند -
The news is by your side.

Advertisement

پاک افغان سرحد دو روز کھلنے کے بعد دوبارہ غیر معینہ مدت کے لئے بند

چمن : پاک افغان سرحد دو روز تک کھلی رہنے کے بعد ایک بار پھر غیر معینہ مدت کے لیے بند کردی گئی۔

تفصیلات کے مطابق پاک افغان سرحد کو ایک مرتبہ پھر سیل کردیا گیا، دو روز قبل وزارت داخلہ کے احکامات پر پاک افغان بارڈر دو روز کے لیے کھولا گیا تھا، جس کے دوران پاکستان اور افغانستان میں پھنسے افراد کو پاسپورٹ، ویزا اور قانونی دستاویزات دکھا کر اپنے اپنے ملک جانے کی اجازت دی گئی، تاہم ہرقسم کی تجارتی سرگرمیاں معطل رہیں۔

زرائع کے مطابق دو روز میں 112 افغان باشندے پاسپورٹ کے ذریعے پاکستان سے افغانستان میں داخل ہوگئے جبکہ بغیر دستاویزات کے 10 ہزار کے قریب افغان باشندے اپنے وطن واپس لوٹے، اس کے علاوہ 11 پاکستانی اور 6 افغان باشندے پاسپورٹس دکھا کر افغانستان سے پاکستان میں داخل ہوئے۔

اس موقع پر سرحد کے دونوں جانب سیکیورٹی کے سخت انتظامات کیے گئے تھے۔


مزید پڑھیں: پاک افغان سرحد کو 2روز کے لیے کھول دیا گیا


یاد رہے کہ تقریباً 18 روز کی بندش کے بعد 7 مارچ کو طورخم اور چمن کے مقام پر پاک افغان سرحد کو کھولا گیا تھا، کھولنے کا مقصد اُن افغان باشندوں کو سہولت فراہم کرنا تھا، جو قانونی دستاویزات کے ساتھ اپنے ملک واپس جانا چاہتے ہیں۔

خیال رہے کہ طورخم بارڈر سے روزانہ 800 گاڑیاں جبکہ چمن بارڈر پر باب دوستی سے ایک ہزار تک مال بردار گاڑیاں درآمدات برآمدات ، افغان ٹرانزٹ ٹریڈ اور نیٹو کا سامان لے کر افغانستان سے آتی اور جاتی ہیں۔


مزید پڑھیں : پاک افغان سرحدغیرمعینہ مدت کےلیے بند


واضح رہے کہ گذشتہ ماہ سیہون دھماکے کے بعد طورخم اور چمن میں باب دوستی بارڈر کو ہر قسم کی آمد و رفت کے لیے بند کردیا تھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں