پاک افغان بارڈر، باب دوستی چار روز بعد بھی بند ہے -
The news is by your side.

Advertisement

پاک افغان بارڈر، باب دوستی چار روز بعد بھی بند ہے

چمن : پاک افغان بارڈر پر باب دوستی آج چوتھے روز بھی بند ہے،پاک افغان سرحد کی بندش سے تجارتی سرگرمیاں معطل ہیں جب کہ گذشتہ روز افغان فورسزکی درخواست پر پاکستان اور افغانستان کی فورسزکی فلیگ میٹنگ بھی بےنتیجہ ختم ہوئی۔

تفصیلات کے مطابق چمن میں پاک افغان سرحد پر پاکستانی پرچم کی توہین اور باب دوستی پر افغان شہریوں کی پتھراو کے باعث آج چوتھے روز بھی پاکستانی فورسز نے بہ طور احتجاج پاک افغان سرحد کو بند کر رکھا ہے جس کے باعث دو طرفہ تضارتی سرگرمیاں معطل ہیں جب کہ بارڈر پر کھڑے پَھلوں کے ٹرک میں موجود پھل خراب ہونے کا اندیشہ بڑھتا جا رہا ہے۔

سرحد کے دونوں جانب نیٹوں کنٹینرز اور مال بردار ٹرکوں کی لمبی قطاریں لگ گئی ہے سرحد کی بندش سے تاجروں اور پاک افغان عوام کو سخت مشکلات کا سامنا دوسری جانب تاجروں کا کہنا ہے کہ سرحد کی بندش سے چار روز سے کھڑے ٹرکوں پر موجود مال کے خراب ہونے کا خدشہ پیدا ہوگیا ہے جس سے تاجر برادری کو کروؤوں روبے کے نقصان کا سامنا کرنے پڑے گا۔

اسی سے متعلق : مودی مخالف مظاہروں پر باب دوستی پراشتعال انگیزی، باب دوستی بند

واضح رہے کہ 18 اگست کو افغان فورسز نے اپنے شہریوں کے ساتھ مل کر پاکستانی پرچم کی توہین کی تھی افغان فورسز اور شہریوں کی جانب سے باب دوستی پر پھتراو سے دوستی گیٹ کے شیشے ٹوٹ گئے تھے جس کے بعد پاکستانی فورسز نے پاک افغان سرحد بند کر دی تھی۔ گذشتہ روز دوستی گیٹ کھولنے سے متعلق فلیگ میٹنگ بے نتیجہ ختم ہوئے تھے۔میٹنگ میں پاکستانی فورسز کی طرف سے لیفٹینٹ کرنل محمد چنگیز جبکہ افغان فورسز کی طرف سے کرنل محمد علی نے شرکت کی۔

یہ بھی پڑھیں : باب دوستی پر کشیدگی ، پاک افغان فورسز کی فلیگ میٹنگ

فلیگ میٹنگ میں پاکستانی فورسز کی طرف سے 18 اگست کو ہونے والے واقع پر سخت اظہار ناراضگی کی گئی اور کہا کہ افغان شہریوں نے باب دوستی پر پتھراو اور پاکستانی جھنڈے کی توہین کیوں کی جس پر افغان فورسز نے بھی اپنے تحفظات سے آگا ہ کیا جس کے بعد میٹنگ میں باب دوستی کھولنےسے متعلق بات چیت کی گئی تاہم مذاکرات کسی بھی پیش رفت کے بغیر ختم ہوگئے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں